الیکشن کمیشن نے پنجاب کی حد بندیوں پر اعتراض لگا دیا


اسلام آباد: الیکشن کمیشن نے پنجاب میں کی گئی حد بندیوں پر اعتراضات لگا دئیے ہیں۔ پنجاب حکومت نے کئی اضلاع میں حدبندیوں کی جگہ حلقہ بندیاں کردیں۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب کی بلدیاتی حدبندیوں پر اعتراضات پنجاب حکومت کےحوالے کئے جائیں گے۔ الیکشن کمیشن پنجاب حکومت کو حد بندیوں کو درست کرنے کے لئے 15 دن کا وقت دے گا۔ حدبندیاں درست ہونے کے فوری بعد بلدیاتی حلقہ بندیوں پر کام شروع کیا جائے گا۔

پنجاب میں بلدیاتی انتخابات کے لیے حلقہ بندیوں پر قائم مقام چیف الیکشن کمشنر کی سربراہی میں الیکشن کمیشن میں اہم مشاورتی اجلاس ہوا۔ ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن نے پنجاب میں کی گئی حد بندیوں پر اعتراضات لگا دئیے ہیں۔  اعتراض میں کہا گیا ہے کہ پنجاب حکومت نے کئی اضلاع میں حدبندیوں کی جگہ حلقہ بندیاں کردیں۔ اجلاس میں کہا گیا ہے کہ پنجاب حکومت نے الیکشن کمیشن کے اختیارت میں مداخلت کی ہے۔

ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن نے پنجاب کی حدبندیوں پر اعتراضات کو تحریری شکل دینے کا فیصلہ کر لیا جس کے بعد پنجاب کی بلدیاتی حد بندیوں پر اعتراضات پنجاب حکومت کےحوالے کئے جائیں گے۔ پنجاب حکومت کو حد بندیوں کو درست کرنے کے لئے 15 دن کا وقت دیا جائے گا۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ حدبندیاں درست ہونے کے فوری بعد بلدیاتی حلقہ بندیوں پر کام شروع کیا جائیگا۔ حدبندیوں پر اعتراضات سے متعلق صوبائی الیکشن کمشنر کی سربراہی میں اجلاس کل (24 دسمبر) بھی ہو گا۔


Leave A Reply

Your email address will not be published.