افغانستان میں دھماکہ،7 افغان فوجی ہلاک

افغانستان میں دھماکہ

کابل: افغانستان میں طالبان کے حملے میں کم از کم سات افغان فوجی ہلاک ہوگئے ہیں۔

افغانستان کی وزارت دفاع نے کہا کہ "دہشت گردوں”  نے ازبکستان کی سرحد کے قریب صوبہ بلخ کے ضلع دولت آباد میں منگل کی صبح مشترکہ فوجی اڈے پر حملہ کیا۔ یہ اڈہ فوج اور نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سیکیورٹی اور افغانستان کی خفیہ ایجنسی کے مابین مشترکہ زیر استعمال ہے۔

وزارت دفاع نے ایک بیان میں کہا ہے کہ طالبان کےاس حملے کے نتیجے میں افغان فوج کے کم از کم سات فوجی ہلاک اور تین دیگر زخمی ہوئے ہیں۔ اس حملے میں این ڈی ایس کے تین اہلکاروں کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے۔

طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے بتایا ہے کہ اس حملے میں 20 فوجی ہلاک ہوئے ہیں جن میں ایک کمانڈر بھی شامل ہے۔ ذبیح اللہ مجاہد نے اپنے ایک ٹویٹ میں بتایا ہے کہ طالبان کے اس حملے میں افغانستان کی فوج کےچھ فوجی زخمی ہوئےہیں اور چار فوجیوں کو گرفتار کرلیا گیا۔ طالبان کمانڈر نے اس فوجی اڈے پر قبضہ کرنے کا دعویٰ بھی کیا ہے۔

طالبان نے اس حملے سے ایک دن پہلے قندوز کے امریکی فوجی اڈے پر حملہ کیا تھا جس میں ایک امریکی فوجی کے ہلاک ہونے کی اطلاع ہے۔ طالبان کے دعوے کے مطابق انہوں نے اس گاڑی کو نشانہ بنایا تھا جس میں امریکی فوجی سوار تھا اور ایک امریکی فوجی کے ہلاک ہونے کی اطلاع ہے جبکہ دوسری طرف امریکی فوج نے اس دعوے کو جھوٹا قرار دیتے ہوئے بتایا کہ ایک امریکی فوجی کی موت اسلحے کے ذخیرے میں دھماکے سے ہوئی جس کی تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment