سندھ میں سی این جی اسٹیشنز کھولنے کا فیصلہ کر لیا گیا


کراچی: سندھ بھر میں سی این جی کے شدید بحران کے بعد بالآخر سی این جی اسٹیشنز کھولنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ سندھ میں 29 دسمبر کی صبح سات بجے سے شام سات بجے تک سی این جی اسٹیشنز کھلے رہیں گے۔

تفصیلات کے مطابق ایس ایس جی سی میں آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن اورقائم مقام ایم ڈی ایس ایس جی سی محمد وسیم سےمزاکرات ہوئے۔ ایس ایس جی سی نے اتوار کی شب سی این جی اسٹیشنز کھولنے کا عندیہ دیا ہے۔ ایس ایس جی سی نئے شیڈول کا اعلان اتوار کی شام کو کرے گی۔

صدر سی این جی ایسوسی ایشن غیاث پراچہ کے مطابق گیس کے طویل ناغے سے سی این جی سیکٹر تباہی کے دہانے پر پہنچ چکا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سی این جی اسٹیشنز کی بندش سے سندھ کے 678 سی این جی اسٹیشنز کے ہزاروں ملازمین ایک ہفتے سے بےروزگار ہیں۔ انہوں نے زور دیا کہ ایس ایس جی سی بحران میں تمام شعبوں کےلیے گیس سپلائی کا یکساں معیار مقرر کرے۔ اجلاس میں ایس ایس جی سی نے موقف پیش کیا کہ جنوری 2020 کے پہلے ہفتے تک گیس کا بحران رہے گا۔ حکام نے سی این جی ایسوسی ایشن کو یاد ہانی کروائی کہ بحران کےباوجود سی این جی سیکٹر کو ناغے کی بنیاد پر گیس فراہم کی جائے گی۔

واضح رہے کہ سندھ میں سی این جی اسٹیشنز گزشتہ 14 دنوں سے بند تھے۔ ان 14 دنوں میں صرف 8 گھنٹوں کیلیے اسٹیشنز کو گیس ملی تھی۔ موجودہ شیڈول کے تحت پورے سندھ میں صرف 12 گھنٹوں کیلیے اسٹیشنز کو گیس سپلائی کی جائے گی۔

یاد رہے پنجاب اور اسلام آباد میں گزشتہ 10 دنوں سے سی این جی اسٹیشنز بند ہیں۔


Leave A Reply

Your email address will not be published.