وفاقی حکومت کا سی این جی شعبے کو مکمل گیس فراہم کرنے کا اعلان

Gas-Load-Shedding

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے جنوری اور فروری میں سی این جی شعبے کو مکمل گیس فراہم کرنے کا اعلان اور ایک ہفتے میں گیس صورتحال میں بہتری کی نوید سنادی۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر برائے توانائی عمر ایوب نے کہا ہے کہ نئے ذرائع اور اضافی قدرتی مائع گیس کے ذریعے ایک ہفتے کے اندرگیس فراہمی میں مزید اضافہ کر یں گے۔ وفاقی وزیر برائے عمر ایوب نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ جنوری اور فروری میں مکمل طور پر سی این جی فراہم کی جائے گی۔ پچھلے سالوں کی نسبت زیادہ سردی کیوجہ سے سسٹم میں گیس دباؤ کا مسئلہ رہا۔ ایک ہفتے میں بہتری کی توقع ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال دسمبر کے مقابلے میں12 فیصد سے زائد اضافی گیس مہیا کی جا رہی ہے۔ سوئی نادرن نے دسمبر 2018 میں اوسطً 831 لاکھ کیوبک فٹ یومیہ گیس مہیا کی۔ دسمبر 2019 کے پہلے پندرہ روز میں 30 فیصد گیس بڑھا دی۔ سوئی نادرن نے اس سال گھریلو صارفین کو 47 فیصد زائد گیس سپلائی کی ہے۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ سی این جی کے علاوہ تمام صارفین کو گیس مہیا کی جارہی ہے۔ سوئی سدرن کے گھریلو صارفین کی طرف سے موسم کے پیشِ نظر گیس طلب میں 20 فیصد اضافہ ہوا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ہم نئے ذرائع اور اضافی قدرتی مائع گیس کے ذریعے ایک ہفتے کے اندرگیس فراہمی میں مزید اضافہ کر دیں گے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ حکومتِ سندھ کی ایل این جی درآمد پر پوزیشن کی بنیاد پر سوئی سدرن ایل این جی فراہم نہیں کر سکتی۔

 

آئی ڈی: 2020/01/01/1979 

متعلقہ خبریں

Leave a Comment