آرمی ایکٹ پر مفاہمت؛ پارلیمانی کمیٹی برائے امور قانون سازی میں اتفاق ہو گیا

National Assembly

اسلام آباد: حکومت اور اپوزیشن میں آرمی ایکٹ میں ترمیم پر مفاہمت کے بعد قومی اسمبلی اور سینیٹ میں بل پیش کرنے کے لیے پارلیمانی کمیٹی برائے امور قانون سازی کا اجلاس وزیر دفاع پرویز خٹک کی زیر صدارت ہوا۔

ذرائع کے مطابق اس حوالے سے حکومت و اپوزیشن  کے درمیان  مذاکرات کامیاب ہو گئے ہیں۔ اجلاس میں یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ  پاک افواج سے متعلق سروسز ایکٹس ترمیمی بل آج قومی اسمبلی میں پیش ہوں گے۔ پیش کیے جانے کے بعد بلز سینیٹ اور قومی اسمبلی کی مشترکہ دفاع کی کمیٹی کو بھجوائے جائیں گے۔  اس ضمن میں حکومت  قانون سازی پر پارلیمانی طریقہ کار اختیار کرنے پر تیار ہو گئی ہے۔

واضح رہے کہ قومی اسمبلی کل بلز کی منظوری دے گی۔ قومی اسمبلی اور سینیٹ کے کل اجلاس ہوں گے۔

یاد رہے گزشتہ روز وزیر دفاع پرویز خٹک کی سربراہی میں حکومتی وفد بالترتیب نے ن لیگ اور پیپلز پارٹی کے اعلی سطحی وفد سے ملاقات کی اور ترمیمی ایکٹ پر حمایت طلب کی۔ ن لیگ کی پارلیمانی کمیٹی کے اجلاس میں یہ فیصلہ کیا گیا کہ ن لیگ ترمیمی ایکٹ پر غیر مشروط تعاون کرے گی۔ رات گئے پیپلز پارٹی کی جانب سے بھی اس بل کی حمایت کرنے کا عندیہ دیا گیا۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے حکومت کو آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کے لیے چھ ماہ کا وقت دے رکھا ہے۔ 

آئی ڈی: 2020/01/03/2180

متعلقہ خبریں

Leave a Comment