اسمٰعیل قاآنی ایرانی قدس فورس کے نئے سربراہ مقرر

فوٹو: آئی آر این اے

ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامہ ای نے جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد ان کے نائب اور سینئر ترین عہدے دار بریگیڈئیر جنرل اسمٰعیل قاآنی کو پاسداران انقلاب کی قدس فورس کا سربراہ مقرر کردیا۔

اسمٰعیل قاآنی کی تعیناتی ایک ایسے وقت میں ہوئی ہے جب گزشتہ روز عراق کے دارالحکومت بغداد کے ہوائی اڈے کے نزدیک امریکی فضائی حملے میں قدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی ہلاک ہوگئے تھے۔

ایران کی سرکاری نیوز ایجنسی آئی آر این اے کے مطابق قدس فورس کے نئے منتخب ہونے والے سربراہ بریگیڈئیر جنرل اسمٰعیل قاآنی جنرل قاسم سلیلمانی کے نائب چیف کی حیثیت سے کام کر رہے تھے۔ ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای نے ایرانی پاسداران انقلاب کی قدس فورس کے نئے سربراہ کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ قدس فورس کی کمانڈ بریگیڈیئر جنرل اسمٰعیل قاآنی کو دی جاتی ہے جو مقدس دفاع میں اہم ترین کمانڈروں میں سے ایک ہیں اور انہوں نے شہید ہونے والے کمانڈر کے ساتھ مختلف علاقوں میں اپنی خدمات سرانجام دی ہیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز عراق کے دارالحکومت بغداد میں ایئرپورٹ کے نزدیک امریکی فضائی حملے میں ایرانی پاسداران انقلاب کی قدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی ہلاک ہوگئے تھے۔ ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای نے اس کے عد عمل میں امریکا کو سنگین نتائج کی دھمکی دی تھی اور ملک میں تین روزہ سوگ کا اعلان کیا تھا۔

دوسری جانب امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ جنرل قاسم سلیمانی کو بہت پہلے ہی قتل کر دینا چاہیے تھا۔ ٹوئیٹر پر اپنی ٹوئیٹ میں ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ قاسم سلیمانی سے ‘بہت سال پہلے ہی نمٹ لینا چاہیے تھا کیونکہ وہ بہت سے لوگوں کو مارنے کی سازش کر رہے تھے لیکن وہ پکڑے گئے۔’

آئی ڈی: 2020/01/04/2242 

متعلقہ خبریں

Leave a Comment