سال نو کے آغاز میں ہی خیبر پختونخوا کابینہ تبدیل

پشاور: سال نو کے آغاز پر ہی خبیر پختونخواہ کابینہ میں ردوبدل کرتے ہوئے کئی اہم  قلمدان تبدیل کر دئیے گئے ہیں۔ شہرام تراکئی کو وزیر صحت، وزیر ستان سے تعلق رکھنے والے محمد اقبال کو صوبائی وزیر برائے امداد اور بحالی کا قلمدان تفویض کر دیا گیا ہے۔ مزید بر آں کابینہ میں نو نئے مشیر بھی میں شامل کیے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق خبیر پختونخواہ کابینہ متوقع ردوبدل کو عملی شکل دیتے ہوئے وزیر بلدیات شہرام تراکئی کو وزیر صحت اور وزیر ستان سے تعلق رکھنے والے محمد اقبال کو صوبائی وزیر برائے امداد اور بحالی کا قلمدان دے دیا گیا ہے۔  قلمدانوں کی تبدیلی کے علاوہ کابینہ میں نو نئے مشیر بھی شامل کیے گئے ہیں۔  مزید برآں صوبائی وزیر صحت ہشام اللہ خان کو سوشل ویلفئیر کا چارج دے دیا گیا ہے۔ جاری کردہ نوٹیفیکشن کے مطابق صوبائی وزیر بلدیات امجد علی کا قلمدان بھی تبدیل کر کے انہیں ہاوسنگ کی وزارت دے دی گئی ہے۔ اسی طرح صوبائی وزیر مواصلات اکبر ایوب خان کو صوبائی وزیر ابتدائی اور ثانوی تعلیم کا چارج دیا گیا ہے۔ کابینہ میں دو نئے وزرا بھی شامل کیے گئے ہیں۔ وزیر ستان سے تعلق رکھنے والے محمد اقبال کو صوبائی وزیر برائے امداد اور بحالی اور ملک شاد محمد کو وزیر ٹرانسپورٹ کا چارج دیا گیا ہے۔ اس کے علاقہ وزیر اعلی کے پی کے نو نئے معاونین خصوصی بھی مقرر کیےگئے ہیں۔ وزیر زادہ کو مذہبی امور، تاج خان کو جیل خانہ بات، خلیل کو وزیر اعلی کے مشیر برائے اعلی تعلیم مقرر کیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ یہ تبدیلی ایک ایسے وقت میں ہوئی ہے جب توقع کی جا رہی ہے کہ وفاقی کابینہ میں بھی آنے والے دنوں میں تبدیلی لائی جا سکتی ہے۔ تبدیلی کے اسی تسلسل کو برقرار رکھتے ہوئے حال ہی میں سابق وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کو ایک بار پھر وفاقی کابینہ میں شامل کیا گیا تھا۔

 

آئی ڈی: 2020/01/04/2290

متعلقہ خبریں

Leave a Comment