رینٹل پاور ریفرنسز؛ راجہ پرویز اشرف نے فرد جرم کارروائی پر اعتراض اٹھا دیا

اسلام آباد: سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف نے نیب کے ترمیمی آرڈی نینس کے تحت 2رینٹل پاور ریفرنسز میں فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی پر اعتراض اٹھا دیا ۔ عدالت نے اعتراضات تحریری طور پر جمع کرانے کی ہدایت کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت اسلام آباد کے جج اعظم خان نے سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف کے خلاف گلف اور ریشماں رینٹل پاور ریفرنسز کی سماعت کی۔ سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف حاضری سے استثنا کے باعث عدالت میں پیش نہ ہوئے۔ ان کے وکیل نے نیب ترمیمی آرڈیننس 2019 کے تحت فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی پراعتراض کرتے ہوئے کہا کہ نئے ترمیمی آرڈیننس کے بعد فرد جرم عائد نہیں کی جا سکتی۔ راجہ پرویز اشرف کو کیس سے بری کیا جائے۔ نیب پراسیکیوٹر عثمان مرزا نے مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ نیب آرڈیننس کے سیکشن 10 بی میں کوئی ترمیم نہیں ہوئی۔ رینٹل پاور پراجیکٹس میں بےقاعدگیوں پر  12ریفرنسز عدالت میں زیر التوا ہیں۔ عدالت نے کہا راجہ پرویز اشرف کے وکیل اعتراضات تحریری طور پر کرائیں جس کے بعد نیب کا موقف سنیں گے۔ ریفرنسز کی مزید سماعت 23جنوری تک ملتوی کر دی گئی ۔

 

آئی ڈی: 2020/01/07/2530 

متعلقہ خبریں

Leave a Comment