نیب ترمیمی آرڈیننس کی روشنی میں بری کیا جائے؛ راجہ پرویز اشرف کی استدعا


اسلام آباد: سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف نے نیب ترمیمی ارڈیننس 2019 سے فائدہ اٹھانے کیلئےاحتساب عدالت سے رجوع کر لیا۔ راجہ پرویز اشرف نے رشماء اور گلف رینٹل پاور ریفرنسز میں بریت ‏‏کی درخواست دائر کر دی۔ عدالت نے نیب سے بریت پر جواب طلب کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت کے جج اعظم خان نے رشماء اور گلف رینٹل پاور ریفرنسز میں بریت ‏‏کی درخواست پر سماعت کی۔ راجہ ‏‏پرویز اشرف نے استدعا کی کہ نیب کے ترمیمی آرڈیننس 2019 کی روشنی میں ریفرنس سے بری کیا جائے۔ عدالت نے بریت کی درخواست پر نیب سے جواب طلب کر لیے۔ کیس کی مزید سماعت 20 فروری کو ہو گی۔

دوسری جانب پرویز اشرف کے خلاف کار کے رینٹل پاور پروجکیٹ ریفرنس کی سماعت ہوئی۔ نیب پراسکیوٹر ‏‏نے استدعا کی کہ کار کے ریفرنس میں ضمنی ریفرنس دائر کرنا ہے کچھ وقت دیا جائے۔ ضمنی ریفرنس تیار کر لیا ہے آئندہ سماعت تک ریفرنس دائر ہو جائے گا۔ عدالت نے نیب کی استدعا منظور کرتے ہوئے سماعت 10 فروری تک ملتوی کر دی۔ ریفرنس میں مرکزی ملزم راجہ پرویز اشرف سمیت سابق سیکرٹری شاہد رفیع، وزارت ‏‏پانی و بجلی، نجی کمپنیوں کے افسران نامزد ہیں۔

احتساب عدالت نے غیر قانونی پلاٹس کی الاٹمنٹ کیس میں گرفتار سابق ایم ڈی پی آئی اے اعجاز ہارون کے جوڈیشل ریمانڈ میں 10 فروری تک توسیع کر دی۔

 

آئی ڈی: 2020/01/23/3993

Leave A Reply

Your email address will not be published.