دہشت گردی پر قابو پانا اکیلے حکومتوں کے بس کی بات نہیں: وزیر داخلہ

اسلام آباد: وزیر داخلہ اعجاز شاہ نے کہا ہے کہ دہشت گردی پر قابو پانا اکیلے حکومتوں کے بس کی بات نہیں۔ نا انصافی بڑھتی ہے تو معاشرہ میں بے چینی جنم لیتی ہے۔ دہشت گردی کے خلاف عوام کی ذہنی تربیت اور متاثرین کی بحالی پر توجہ دینا ہو گی۔
منشیات اور جرائم کے انسداد کے لئے اقوام متحدہ کی ذیلی تنظیم یو این او ڈی سی کے ساتھ انسداد دہشت گردی پروگرام کے حوالے سے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر داخلہ نے  کہا کہ دہشت گردی کے خلاف 50 ہزار سے زیادہ وردی میں فورس اب بھی لڑ رہی ہے۔ یہ ایک ایک ایسا مسلہ ہے جو بنی نوع انسان کے زمین پر اترتے ہی شروع ہوا، لیکن پہلی اور دوسری جنگ عظیم کے بعد دہشت گردی کو فروغ ملا۔ انہوں نے کہا کہ جنوبی ایشیا میں دہشت گردی اس وقت آئی جب افغانستان میں روس کے خلاف جنگ کے لئے ساری دنیا سے مسلمان جنگجووں کو افغانستان لایا گیا۔ پھر دنیا افغانستان کو اکیلا چھوڑ کر چلی گئی۔
ان کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کے خلاف عوام کی ذہنی تربیت کے لئے یو این او ڈی سی فنڈز مختص کرے۔ جبکہ کچھ رقم متاثرین دہشت گردی کی بحالی کے لئے رکھے جائیں۔ انہوں نے جیل ریفارمز کی ضرورت پر بھی زور دیا۔

 

آئی ڈی: 2020/01/24/4212

متعلقہ خبریں

Leave a Comment