شام میں باغیوں کے تازہ حملے، ایک ہیلی کاپٹر گرا دیا گیا

ادلیب : شام میں ترکی کے حمایت یافتہ باغیوں نے شامی فوج کا ایک ہیلی کاپٹر گرا دیا ہے۔
ترک میڈیا اور باغیوں کے سربراہ کے مطابق ہیلی کاپٹر کو شام کے شمال مغربی حصے میں نشانہ بنایا گیا ہے ۔ عبداللہ الشامی نے ریوٹرز کو بتایا ک شام کے صوبے ادلیب کے مغربی حصے میں شامی باغیوں اور روسی اتحاد کے درمیان مسلح جھڑپیں جاری ہیں، شامی فوج کے ہیلی کاپٹر کو ان جھڑپوں کے دوران گرایا گیا ہے، شامی باغیوں کو ترک توپ خانے کی مدد بھی حاصل ہے ۔ ترک میڈیا یہ دعویٰ کیا ہے کہ یہ قوی امکان ہے کہ گرنے والا ہیلی کاپٹر شامی فوج ہی کا ہے ۔ادلیب میں شامی اور روسی اتحاد شامی باغیوں کے ٹھکانوں پر شدید حملے کر رہی ہے، اقوام متحدہ کے مطابق اس حملوں کی وجہ سے سات لاکھ لوگ ہجرت کر چکے ہیں اور ان حملوں کی وجہ سے سویلین کی ایک بہت بڑی تعداد ہلاک ہو چکی ہے۔
فروری کےمہینے میں شامی فوج نے ترک فوج کے 13 فوجی ہلاک کر دیئے تھے۔ ترک فوجیوں کی ہلاکتوں کے بعد ترک فوج نے شامی فوج کے 115 ٹھکانوں پر حملہ کیا تھا، ترک فوج کے دعوے کے مطابق 113 ٹھکانوں کو تباہ کر دیا گیا ہے ۔
ترک صدر رجب طیب اردگان نے اپنے فوجیوں کی ہلاکتوں کے بعد شدید ردعمل کا اظہار کیا تھا۔ ترک صدر کا کہنا تھا کہ” ترک فوجیوں کو مارنے پر شامی حکومت کو ایک بہت بڑی قیمت چکانا پڑے گی۔ہم نے شامی فوج کو ادلیب میں بہت بڑا جواب دیا ہے جس کے وہ حقدار تھے، اور یہ کاروائی اب جاری رہے گی” ۔

 

آئی ڈی: 2020/02/11/5053

متعلقہ خبریں

Leave a Comment