ایف آئی اے نے اربوں روپے کی کرپشن کے معاملہ پر انکوائری افسران کو طلب کر لیا


اسلام آباد :ایف آئی اے نے  پاکستان کسٹمز میں  مبینہ اربوں روپے کی کرپشن کے معاملہ پر انکوائری افسران کو طلب کر لیا۔

دستاویزات کے مطابق ایف آئی اے نے پاکستان کسٹمز کے چار افسران ڈاکٹر اختر حسین، سمیرا عمر، جمال ناصر خان اور سعود عمران احمد کو سترہ فروری کو لاہور آفس میں طلب کیا ہے۔ مذکورہ بالا افسران نے سابق کلیکٹر فیصل آباد شوکت علی کے خلاف تحقیقات کرتے ہوئے ان پر کروڑوں روپے کی کریشن کی آڈٹ روپوٹ تیار کی تھی، جس کے بعد ایف بی آر نے شوکت علی کے خلاف محکمانہ کاروائی بھی کروائی تھی۔ جبکہ وفاقی ٹیکس محتسب نے بھی شوکت علی کے خلاف فورنزک آڈٹ کروانے کی ہدایت کی تھی۔ جس کے بعد ان افسران نے اس کے فیصل آباد کے دورانیہ کا آڈٹ کیا تھا جس میں انکشاف ہوا ہے کہ ڈرائی پورٹ سے گیارہ سو کنٹینرز  بغیر ڈیوٹی  اور رعایتی ڈیوٹی ادا کیے کلئیر کیے گئے تھے ۔اس کلئیرنگ  سے قومی خزانہ کو اربوں کا نقصان ہوا۔

ایف آئی اے گذشتہ ایک سال سے اس کیس کی تحقیقات کر رہا ہے۔ اس سلسلے میں ان افسران کو گواہی کے لیے طلب کیا گیا ہے۔

 

آئی ڈی: 2020/02/16/5185

Leave A Reply

Your email address will not be published.