’ٹڈی دل کے حملوں کی پیشگی اطلاع فراہم کرنے والے نظام کی ضرورت ہے‘

Qu-Dongyu-DG-FAO-UN

اسلام آباد: اقوام متحدہ کے ڈائریکٹر جنرل فوڈ اینڈ ایگری کلچرل کیو ڈون جیو کا کہنا ہے کہ پاکستان کو ٹڈی دل کے حملوں سے پیشگی اطلاع فراہم کرنے والا نظام متعارف کرانے کی ضرورت ہے۔   ایف اے او پاکستان کو ٹڈی دل کے تدارک کے لیے تکنیکی معاونت اور ایئر اسپرے جیسی سہولیات فراہم کرنے کے لیے تیار ہے۔ 

ڈی جی اقوام متحدہ فوڈ اینڈ ایگری کلچرل کیو ڈون جیو نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ یہ ان پاکستان کا پہلا دورہ ہے۔ دیہی علاقوں کی ترقی پر خصوصی توجہ دی جارہی ہے۔ منصوبوں کے ساتھ ساتھ پالیسیز کو تبدیل کررہے ہیں ۔حکومت کاشتکاروں کو مکمل سپورٹ فراہم کرنے کے لیے پر عزم ہے۔ ڈی جی ایف اے او نے کہا کہ ٹڈی دل نے 30 سال بعد پاکستان پر حملہ کیا ہے۔ ٹڈی دل نے افریقہ سے پاکستان پر حملہ کیا ہے ۔ٹڈی دل سے بچاؤ کے لیے پیشگی اطلاع فراہم کرنے والا سسٹم فعال کرنا چاہیے۔

ایف اے او ممبر ممالک کو ٹڈی دل کے حملوں سے بچاو کے لیے معاونت فراہم کررہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ٹڈی دل سے بچاو کے لیے پاکستان کو ٹیکنیکل سپورٹ فراہم کرنے کے لیے تیار ہیں ۔ٹڈی دل کے حملوں سے بچاو کے لیے میپنگ اور ایئر اسپرے کی معاونت فراہم کر سکتے ہیں۔ پاکستان میں فی الحال ٹڈی دل قابو میں ہے۔ڈی جی ایف اے او کا کہنا تھا کہ پاکستان میں چاول اور گندم کی قیمتیں کنٹرول ہے۔ سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں کی وجہ سے مہنگائی بڑھ رہی ہے۔

 

آئی ڈی: 2020/02/16/5170

متعلقہ خبریں

Leave a Comment