وفاقی حکومت سوشل میڈیا کنٹرول کرنے کو تیار، قوانین تیار کر لیے گئے

Social Media-Logos

اسلام آباد: وفاقی حکومت بالآخرسوشل میڈیا کنٹرول کرنے کو تیار ہوگئی ہے جبکہ اس حوالے سے  رولزبھی بنالیےگئے ہیں۔مگر عوام اور اراکین پارلیمنٹ پریشان ہیں کہ کیا ان کی پرائیویسی رہے گی یا انکا ڈیٹا چوری ہونے کا خدشہ بڑھ جائے گا۔

سٹیزن پروٹیکشن رولز کے اجراء کے پندرہ روز کے اندرنیشنل کوآرڈی نیٹر مقررہوگا۔ کوآرڈی نیٹر کی ہدایت پرسوشل میڈیا کمپنی چوبیس گھنٹے کے اندرمواد ہٹانے کی پابند ہوگی ۔عالمی سوشل میڈیا پلیٹ فارمز تین ماہ میں پاکستان میں رجسٹریشن کرائیں گے۔ جاری کردہ رولز کے مطابق تمام سوشل میڈیا پلیٹ فارمز اور کمپنیوں کو ایک سال میں پاکستان میں ڈیٹا بیس سرور بنانا ہوں گے۔ اس قانون کے بعد سوشل میڈیا کمپنی تحقیقاتی ایجنسی کو معلومات فراہم کرنے کی پابند ہوگی ۔اگر کمپنیوں نے تعاون نہ کیا تو ان کا سارا آن لائن سسٹم سوشل میڈیا ایپلی کیشن اورسروسز معطل کر دی جائیں گی۔ ڈیجیٹل رائیٹس ایکٹیوٹس کا کہنا ہے کہ ایسے قانون سےعوام کے مسائل بڑھ جائیں گے۔

سوشل میڈیا کے نئے قوانین پر اراکین پارلیمنٹ نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ راتوں رات قانون لایا گیا اور ممبران کو نہیں بتایا گیا ۔ اب دیکھتے ہیں کہ قانون پر کتنا عمل ہوتا ہے ؟ 

 

آئی ڈی: 2020/02/19/5311

متعلقہ خبریں

Leave a Comment