توشہ خانہ کیس ؛ دو سابق وزرائے اعظم، سابق صدر اور مجید فیملی ملزمان نامزد

جعلی اکاؤنٹس کیسز میں نیب نے توشہ خانہ سے لی جانے والی گاڑیوں کی جعلی بینک اکاونٹس سے ادائیگی پر نیا ریفرنس دائر  کردیا ہے۔ اس ریفرنس میں نواز شریف، سابق صدر آصف زرداری اور  یوسف رضا گیلانی کو ملزم نامزد کیا گیا ہے۔نیب نے فرزانہ راجہ اور دیگر 18 ملزمان کے خلاف بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام میں مبینہ کرپشن کا ریفرنس بھی دائر کر دیا ہے۔

ریفرنس میں الزام لگایا گیا کہ سابق صدر آصف زرداری، نواز شریف اور یوسف رضا گیلانی نے غیرقانونی طور پر گاڑیاں حاصل کیں ۔آصف علی زرداری نے گاڑیوں کی صرف 15 فیصد ادائیگی انورمجید اور عبدالغنی مجید کے ذریعے کی۔ ریفرنس میں کہا گیا کہ آصف زرداری کو بطور صدر لیبیا اور متحدہ عرب امارات سے بھی گاڑیاں تحفے میں ملیں، جنہیں انہوں نے توشہ خانہ میں جمع کرانے کے بجائے ذاتی استعمال میں رکھ لیا۔ نیب کے مطابق نواز شریف 2008 میں کسی عہدے پر نہیں تھے، لیکن انہیں بغیر کوئی درخواست دیئے یوسف رضا گیلانی نے توشہ خانہ سے گاڑی دی۔  نواز شریف نے جان بوجھ کر یوسف رضا گیلانی سے غیرقانونی فوائد حاصل کیے۔

ریفرنس میں کہا گیا کہ ملزمان نیب آرڈیننس کی سیکشن نائن اے کی ذیلی دفعہ دو چار سات اور 12 کے تحت کرپشن کے مرتکب ہوئے لہذا ٹرائل کرکے سخت سزا سنائی جائے۔

دوسری جانب نیب نے بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام میں مبینہ کرپشن کا ریفرنس بھی احتساب عدالت میں دائر کر دیا ہے۔ ریفرنس میں فرزانہ راجہ اور دیگر 18 افراد کو ملزم نامزد کیا گیا ہے۔

آئی ڈی: 2020/03/02/5858

اپنا تبصرہ بھیجیں