پاکستان تحریک انصاف کی تین اراکین نا اہلی سے بچ گئیں

Maleeka Bukhari-Kanwal Shozab-Tashfeen Safdar-disqualification

اسلام آباد: حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف کی تین خواتین ارکان اسمبلی نا اہلی سے بچ گئیں۔ 

اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامر فاروق نے پی ٹی آئی خواتین ارکان پارلیمنٹ ملیکہ بخاری، تاشفین صفدر اور کنول شوزب کی نا اہلی کے لئے دائر درخواستوں پر فیصلہ سنا دیا۔ عدالت نے تینوں خواتین ارکان پارلیمنٹ کو نا اہل قرار دینے کی ن لیگ کی درخواستیں مسترد کر دیں۔ جسٹس عامر فاروق نے محفوظ سناتے ہوئے قرار دیا کہ تمام درخواستیں میرٹ پر پورا نہیں اترتیں اس لئے مسترد کی جاتی ہیں۔

واضح رہے عدالت نے 6 دسمبر کو دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کیا تھا۔ اس سے قبل عدالت نے ایک بار فیصلہ محفوظ کیا، مگر بعد میں دوبارہ دلائل طلب کر لیے اور حتمی دلائل سننے کے بعد دوبارہ فیصلہ محفوظ کیا تھا۔

مسلم لیگ ن کی رکن قومی اسمبلی بیگم طاہرہ بخاری اور شائستہ پرویز ملک نے تینوں ممبران قومی اسمبلی کو 62 ون ایف کے تحت نا اہل کرنے کی استدعا کی تھی۔ کیس میں ملیکہ بخاری اور تاشفین صفدر پر دہری شہریت چھپانے جبکہ کنول شوزب پر عدالت میں ووٹ کی تبدیلی سے متعلق غلط بیانی کے الزامات عائد کیے گئے تھے۔

 

آئی ڈی: 2020/03/03/5889

متعلقہ خبریں

Leave a Comment