ڈاکٹر عدنان پر حملہ نواز شریف کا علاج روکنے کی کوشش ہے: شہباز شریف

Dr Adnan-Shahbaz Sharif

اسلام آباد: پاکستان مسلم لیگ(ن) کے صدراور قائد حزب اختلاف شہبازشریف نے سابق وزیراعظم میاں محمد نوازشریف کے ذاتی معالج ڈاکٹرعدنان پر ہونے والے حملے کو ان کے علاج میں رکاوٹ ڈالنے کی کوشش قرار دیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر عدنان پر حملہ نواز شریف کے علاج میں رکاوٹ ڈالنے کے لیے کیا گیا۔ حملے کاانداز بتا رہا ہے کہ یہ منظم اور سوچی سمجھی واردات ہے۔ شہبازشریف نے کہا کہ ڈاکٹر عدنان پر حملےکی رپورٹ درج کروائی جاچکی ہے اور ہمیں امید ہے لندن پولیس اس واقعے کی تحقیقات کر کے ملوث عناصر کو سامنے لائے گی۔ شہباز شریف کا مزید کہنا تھا کہ شرپسند اس سے پہلے ہماری رہائش گاہوں پر بھی حملے کرچکے ہیں۔ انہوں نے پارٹی رہنماوں اور کارکنوں کو مشتعل نہ ہونے کا پیغام بھی دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اللہ تعالی کا شکر ہے کہ ڈاکٹر عدنان کی جان حملے میں محفوظ رہی، دعا ہے کہ اللہ تعالی ان کو جلد صحت یاب فرمائے۔

واضح رہے کہ  لندن میں سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کے ذاتی معالج ڈاکٹرعدنان خان پر نقاب پوش نامعلوم افراد نے تشدد کیا ہے جس کے باعث انہیں شدید چوٹیں آئی ہیں۔ حملے میں ڈاکٹرعدنان کے سر، چہرے اور سینے پر شدید چوٹیں آئیں ہیں اور انہیں علاج کے لیے فوری طور پر اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔

مقامی پولیس کے مطابق ڈاکٹر عدنان سے ان کی گھڑی چھیننے کی کوشش کی گئی۔

 

آئی ڈی: 2020/03/10/6112

متعلقہ خبریں

Leave a Comment