فلم زندگی تماشہ پر بین کی گونج سینیٹ تک پہنچ گئی

Zindagi-Tamasha-Poster

اسلام آباد: فلم زندگی تماشہ پر بین کی باتیں پارلیمنٹ کے ایوانوں میں پہنچ گئیں۔ سنسر بورڈ فلم کو سینیٹ کی قائمہ کمیٹی انسانی حقوق کی 16 مارچ کو ہونے والے اجلاس میں معائنے کے لیے پیش کرے گا۔ چئیرمین کمیٹی مصطفیٰ نواز کھوکھر نے کہا ہے کہ چند افراد کے ہاتھوں ملک کو یرغمال نہیں ہونے دیں گے۔

تفصیلات کے مطابق مصطفیٰ نواز کھوکھر کی صدارت میں سینٹ کی قائمہ کمیٹی انسانی حقوق کا اجلاس ہوا۔ اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے چیرمین سنسر بورڈ دانیال گیلانی نے کہا کہ فلم کے ریلیز سے ہمارے سمیت پنجاب سنسرز بورڈ  بھی پریشرائیز رہا۔ سنسرز بورڈ حکام رونما ہونے والے مختلف واقعات کی بنیاد پر پریشر میں رہے۔ 30 جولائی 2019 کو بورڈ نے فلم کو سرٹیفکیٹ دیا، لیکن بعد میں حالات خراب ہوئے۔

چئیرمین کمیٹی مصطفی نواز چیئرمین سنیسر شپ بورڈ پر برہم ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ  آپ چند لوگوں کے کہنے پر فلم روک رہے ہیں جنہوں نے اسلام آباد پر یلغار کی۔ ان لوگوں نے آرمی چیف کیخلاف فتوے دیئے۔

اجلاس میں معذور افراد کے حقوق سے متعلق ترمیم بل 2020پر غور کیا گیا۔ بل کے متن سے متعلق بتایا گیا کہ معذور افراد کے حقوق کے تحفظ کیلئے کونسل بنائی جائے گی۔ معذور افراد کے حقوق کی پامالی کی صورت میں متعلقہ فرد کونسل کو شکایت کرے گا۔

 

آئی ڈی: 2020/03/11/6239

متعلقہ خبریں

Leave a Comment