کورونا وائرس: سندھ حکومت نے نماز جمعہ کے اجتماعات پر پابندی لگادی

کورونا وائرس کے پھیلاو کو روکنے کے لیے مختلف مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے علما کرام جامعۃ الاظہر سے جمعے کی نماز اور دیگر باجماعت نماز معطل کرنے کی ہدایات پر اتفاق رائے اختیار نہیں کرپائے مگر سندھ اور بلوچستان حکومت نے مساجد میں نماز جمعہ پر پابندی عائد کردی۔

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کے ساتھ ویڈیو کانفرنس کے دوران حنفی مسلک کے معروف علما نے جامعۃ الاظہر کی ہدایت پر عمل کرنے سے انکار کیا تاہم شیعہ اور اہل حدیث مسلک نے اس کی حمایت کی۔

دریں اثنا سندھ حکومت نے مساجد میں باجماعت نماز بشمول نماز جمعہ پر سماجی دوری برقرار رکھنے اور کورونا وائرس کے پھیلاو کو روکنے کے لیے معطل کرنے کا اعلان کیا۔

وزیر اعلیٰ سندھ کے مشیر بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ حکومت نے تمام مسالک کے علما سے مشاورت کرنے کے بعد یہ فیصلہ کیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بیان جاری کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت نے کورونا وائرس کے پھیلاو کو روکنے کے لیے اہم فیصلہ کیا ہےعوام اب مساجد میں نماز ادا نہیں کرسکیں گے صرف مسجد کے عملے سمیت 5 افراد نماز ادا کرسکیں گے۔

صوبائی وزارت اطلاعات کا کہنا تھا کہ یہ پابندی 5 اپریل تک جاری رہے گی۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment