فیس بک میسنجر میں نیا فیچر متعارف

فیس بک نے نئے نوول کورونا وائرس کی وبا کے حوالے سے افواہوں اور غلط معلومات کو پھیلنے سے روکنے کے لیے میسنجر میں فارورڈ میسجز کی تعداد میں کمی لانے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس مقصد کے لیے کمپنی کی جانب سے میسنجر میں ایک نئے فیچر کو آزمایا جارہا ہے جس کے تحت ایک میسج کو صارف 5 افراد سے زیادہ کو نہیں بھیج سکے گا، تاکہ افواہوں کے پھیلائو کو مشکل تر بنایا جاسکے۔

یہ فیچر فی الحال متعارف نہیں کرایا گیا مگر فیس بک نے تصدیق کی ہے کہ کمپنی کے اندر اس کی آزمائش کی جارہی ہے۔

تحریر جاری ہے‎

اس طرح کا فیچرواٹس ایپ میں گزشتہ سال پیش کیا گیا تھا جس کے تحت صارف ایک میسج کو 5 سے زیادہ بار فارورڈ نہیں کرسکتے۔

چیٹ ایپس جیسے واٹس ایپ اور فیس بک میسنجر میں صارفین آسانی سے معلومات لاتعداد افراد کو بھیج سکتے ہیں، تو اسی لیے وہ اکثر افواہوں اور غلط تفصیلات وائرل ہونے کا باعث بن جاتے ہیں۔

اس نئے فیچر کا انکشاف مختلف ایپس کے نئے فیچرز کے بارے میں قبل از وقت آگاہ کرنے والی ٹوئٹر صارف جین مینچون وونگ نے کرتے ہوئے ٹوئٹ پر بتایا کہ یہ فیچر کس طرح کام کرے گا۔

فیس بک کے ترجمان نے بھی اس فیچر کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ اس کا مقصد غلط معلومات کو پھیلنے سے روکنا ہے خصوصاً موجودہ کورونا وائرس کی وبا کے حوالے سے جعلی خبریں اورمشوروں پر توجہ مرکوز کی جارہی ہے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ ہم اپنے ہلیٹ فارمز پر کووڈ 19 کے حوالے سے جعلی خبروں کو روکنے کے لیے ہر ممکن کوشش کررہے ہیں، جس کے لیے مختلف آپشن جیسے فارورڈ میسج کی تعداد محدود کرنا کو بھی دیکھا جارہا ہے، تاہم یہ فیچر فی الحال تیاری کے مرحلے میں ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں