اسٹیٹ بینک،قرضوں کی ادائیگی کو سال کیلئے مؤخر کرنے کی منظوری

کراچی: اسٹیٹ بینک کی جانب سے منظوری کے بعد صارفین کا گاڑی، گھر، ذاتی خرچ اور کریڈٹ کارڈ کا قرض مؤخرہوسکے گا۔
 اسٹیٹ بینک پاکستان نے صارف قرضوں کی ادائیگی ایک سال تک مؤخر کرنے کی منظوری دے دی ہے۔اسٹیٹ بینک پاکستان نے کنزیومرصارفین کے لیے ریلیف کا اعلان کرتے ہوئے صارف قرض کا اصل زر ایک سال مؤخر کرنے کی مشروط اجازت دے دی۔ گاڑی، گھر، ذاتی خرچ اور کریڈٹ کارڈ کے صارفین کا قرض مؤخر ہو سکے گا۔
اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ یہ سہولت ان صارفین کے لیے دستیاب ہو گی جن کی ادائیگی 31 دسمبر تک ریگولر ہو جبکہ قرض ادائیگی مؤخر کرنے پر بینک کوئی فیس یا سود چارج نہیں کریں گے تاہم بینک اس دوران صرف سود یا منافع کی وصولی کر سکیں گے۔ جو صارفین سود یا منافع کی رقم ادا نہ کر سکیں وہ ری اسٹرکچر کی درخواست کر سکتے ہیں اور قرضوں کو مؤخر یا ری شیڈول کرنے سے کریڈٹ ہسٹری متاثر نہیں ہو گی۔
اسٹیٹ بینک نے مزید وضاحت جاری کرتے ہوئے کہا کہ قرضوں کی ری شیڈول اورمؤخر کرنے کی درخواست بینک ہیلپ لائن پر کی جائے گی۔

 

آئی ڈی: 2020/03/31/7398

متعلقہ خبریں

Leave a Comment