جراشیم کش ادویات کی قلت اور حفاظتی انتظامات کی عدم دستیابی پر کپتانوں نے ڈی بریف لکھ دیا

اسلام آباد :کرونا وائرس سے نمٹنے کیلئے پی آئی اے کی جانب سے سول ایوی ایشن کے احکامات کی دھجیاں اڑا دی گئی، کپتانوں نے بھانڈا پھوڑ دیا. جراشیم کش ادویات کی قلت اور حفاظتی انتظامات کی عدم دستیابی پر کپتانوں نے ڈی بریف لکھ دیا۔

ڈی بریف نوٹ میں لکھا گیا ہے کہ  گلگت سے اسلام آباد روانگی سے قبل پرواز میں جراشیم کش سپرے نہیں کیا گیا۔ جراشیم کش ادویات کی قلت ہے۔ سول ایوی ایشن اتھارٹی کا ہدایت نامہ کے مطابق  جہاز میں مسافر سوار ہونے سے قبل جہاز میں سپرے ضروری ہے ۔ پی آئی اے انتظامیہ کی جانب سے ہدایت نامہ نظر انداز کیا، کینڈا سے آنے والی پرواز میں بھی 40 فیصد مسافروں کو ماسک فراہم نہیں کیا۔ کپتان کی نشاندہی پر ماسک جہاز میں پہنچائے جس سے جہاز 34 منٹ تاخیر سے روانہ ہوا، ایس او پی کے مطابق بغیر ماسک کے مسافر جہاز میں پہنچ نہیں سکتا۔

کپتان کے مطابق کینڈا آنے والی پرواز پر مسافروں کی سکریننگ کی تفصیلات بھی فراہم نہیں کی گئی، پی آئی اے عملہ کو ماسک اور گلیوز کم تعداد اور گھٹیا کوالٹی کے فراہم کیے گئے۔ موجود صورتحال میں کرونا وائرس سے بچاو کیلئے استعمال استعمال حفاظتی انتظامات مزید بہتر کرنے ہوں گے، 538 گرام کا جراشیم کش سپرے سے پورے جہاز کی صفائی کیسے کی جائے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment