گندم اور چینی تحقیقات: وزیراعظم عمران خان نے مثال قائم کر دی

اسلام آباد: عمران خان کے معاون خصوصی شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ ریاست کا کام ایک ریگولیٹرکا ہے پولٹری مافیا نہیں اور بھی لوگ جن کےخلاف کام کرنے کی ضرورت ہے۔ مسابقتی کمیشن مافیاز کے خلاف مؤثر کردار ادا کرنے میں ناکام رہا ہے۔ ہماری کوشش ہے کہ کارٹیلزکےخلاف مسابقتی کمیشن کو مؤثر بنایا جائے۔

معاون خصوصی شہزاد اکبر نے کہا کہ کہ وزیراعظم نےگندم اورچینی کےمعاملےپرمثال قائم کردی۔ فرانزک رپورٹ کو نہ صرف پبلک کیا جائے بلکہ اس پر ایکشن بھی لیا جائے ہم کسی کاروبارکانقصان نہیں چاہتےہیں۔

وزیراعظ٘م کے معاون خصوصی نے مزید کہا کہ ایک خاص تناسب گندم سےمحٖفوظ کی جاتی ہے مارکیٹ میں صورتحال کےمطابق گندم دی جاتی ہے۔وفاق اور پنجاب حکومت نے ذمہ دار کا مظاہرہ کیا گندم خریداری کے معاملے پرسندھ نے مجرمانہ غفلت برتی۔

ان کا کہنا تھا کہ رپورٹ کےمطابق ملک میں گندم کی صورتحال کا ٹھیک اندازہ نہیں لگایا گیا بغیر کابینہ کی اجازت میدہ برآمد کرنے کی اجازت دی گئی۔

شہزاد اکبر کا کہنا تھا کہ جو بھی مسائل ہوئےوہ انتظامی نوعیت کےتھے صرف پنجاب کے اوپرالزام کا سارا بوجھ ڈالنا ٹھیک نہیں۔ گندم میں پنجاب کی نسبت چنددن پہلے ہی گندم جمع کرناشروع کردی جاتی ہے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment