حکومت پنجاب کا تاریخی مساجد اور مزارات کی تزئین و آرائش کرنے کا فیصلہ

لاہور: حکومت پنجاب نے مذہبی سیاحت کوفروغ دینے کیلئے تاریخی مساجد اور مزارات کی آرائش و تزئین کا فیصلہ کیا ہے۔

تفصیل کے مطابق حکومت پنجاب کی ہدایت پر محکمہ پنجاب اوقاف آرگنائزیشن کے حکام کا کہنا ہے اوقاف پراپرٹیز کو محفوظ ہاتھوں میں رکھنے اور اس کی جغرا فیائی حد بندی کے لئے کمپیوٹرائزڈ جیو میپنگ 8 کروڑ روپے سے مکمل کی جائے گی۔ جنوبی پنجاب سمیت صوبے بھر میں نئے مالی سال 21-2020 کی اسکیموں کیلئے 249.189 ملین روپے مختص کیے گئے ہیں۔ ان سکیمیوں میں شمالی پنجاب کی 5 نئی اسکیموں جن میں حضرت داتا گنج بخش میں وضو کے پانی کو قابل استعمال بنانے کی اسکیم کیلئے ایک کروڑ 36 لاکھ 89 ہزار روپے، مزار امام علی الحق سیالکوٹ پر زائرین کو سہولیات کے لئے ایک کروڑ روپے، مزار بی بی پاک دامن کی اپ گریڈیشن اسکیم کے لئے ڈھائی کروڑ روپے، بادشاہی مسجد میں بحالی کے کام کے لئے ایک کروڑ روپے جبکہ دربار حضرت فرید پاکپتن دربار پر ترقیاتی اسکیم کے لئے ڈیڑھ کروڑ روپے مختص کیے گئے ہیں۔

وزیر اعلیٰ پنجاب کے حکم پر جنوبی پنجاب میں 10 نئی اسکیموں جن میں مزار حضرت بہاؤالدین ذکریا ملتانی کے لئے ایک کروڑ روپے، مزار حضرت عبد الوہاب بخاری ڈیرہ دین پناہ ضلع مظفر گڑھ کے لئے 2 کروڑ، دیوان چاولی مشائخ بورے والا ڈویلپمنٹ اسکیم کے لئے ایک کروڑ روپے،دربار حضرت سخی سرور ڈیرہ غازی خان کی بحالی کے لئے ایک کروڑ روپے، مزار حضرت حبیب ویلیج بغداد ضلع خانیوال کی بحالی کے لئے ایک کروڑ روپے، مزار حضرت زندہ پیر ڈیرہ غازی خان پرازائرین کی سہولت اسکیم کے لئے 50 لاکھ روپے جبکہ مزار حضرت چن پیر ضلع لیہ کی بحالی کے لئے ایک کروڑ ابھی تجویز کیے گئے ہیں۔ تمام اوقاف مزارات پر نذرانہ کی آٹو میشن کے لئے ایک کروڑ 5 لاکھ روپے تجویز کیے گئے ہیں۔ صوبے بھر میں اوقاف اثاثہ جات کی 80 ملین روپے سے جیومیپنگ کی جائے گی۔

جنوبی پنجاب میں دربار حضرت دیوان چاولی مشائخ بوریوالا وہاڑی میں عدم دستیاب سہولیات کی فراہمی کر لیے ایک کروڑروپے، دربار حضرت سخی سرور ڈیرہ غازی خان کی تزئین و آرائش کے لئے ایک کروڑ روپے،دربار حضرت عبد الوہاب بخاری ڈیرہ دین پناہ مظفر گڑھ میں عدم دستیاب سہولیات کی فراہمی کے لئے 2 کروڑ روپے، دربار حضرت پیر راجن شاہ لیہ میں عدم دستیاب سہولیات کی فراہمی کے لئے ایک کروڑ روپے ، خود کار نظام کے ذریعے تمام درباروں پر نذرانوں کی وصولی پراجیکٹ کے لئے ایک کروڑ 50 لاکھ روپے مختص کیے جا چکے ہیں۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment