ایل این جی کیس: سابق وزیراعظم بیٹے کے ہمراہ نیب کے سامنے پیش


اسلام آباد: ایل این جی کیس میں ن لیگ کے سینئر رہنما اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی بیٹے کے ہمراہ نیب کی کمبائنڈ انوسٹی گیشن ٹیم کے سامنے پیش ہوئے۔

دوران انویسٹیگیشن نیب ٹیم نے نئے شواہد کی روشنی میں معاہدوں کے وقت ہونیوالی ٹرانزیکشنز سے متعلق سوالات کیے۔ شاہد خاقان عباسی نے جواب دیا کہ انکا اِن ٹرانزیکشنز سے کوئی تعلق نہیں۔انہوں نے ایل این جی معاہدہ قوائد کے مطابق کیا۔ اس پر نیب کی جانب سے شاہد خاقان عباسی کو ایک اورسوالنامہ کا  تحریری جواب جمع کرانے کی ہدایت کی گئی۔

نیب آفس کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کاکہنا تھا کہ نیب سیاسی طور پر استعمال ہورہا ہے۔سوالنامہ میں پوچھا ہے کہ ٹیکس ادا کرتے ہیں یا نہیں۔ خوشی ہوئی کہ نیب نے ٹیکس سے متعلق بھی پوچھ ہی لیا۔
شاہد خاقان بولے کہ نیب والے راضی نہیں ہوتے۔ اب چیئرمین نیب میٹنگ کریں گے اور پھر انہیں گرفتار کرا دیں گے۔ عوام کو نہیں پتا شہزاد اکبر کا ماضی کیا ہے، ان کی صورت میں عمران خان نے الزامات کا ایک ادارہ کھول رکھا ہے۔اگر تحقیقات ہی کرنی ہیں تو لاہور میں ایک گھر بنا ہے۔کس کا بنا؟ کتنے میں بنا؟ تحقیقات کریں۔


Leave A Reply

Your email address will not be published.