نامعلوم افراد کی فائرنگ سے دو پولیس اہلکار شہید

اسلام آباد: نا معلوم افراد کی فائرنگ سے اے ایس آئی محسن ظفر اورہیڈ کانسٹیبل سجاد شہید ہو گئے۔ شہداء کی نمازجنازہ پولیس لائن ‏ہیڈکوارٹرمیں ادا کردی گئی بعد ازاں جسد خاکی پورے اعزازکے ساتھ ان کے آبائی علاقوں ‏میں روانہ کردیے گئےہیں۔

رپورٹ کے مطابق پشاورجانے والے نامعلوم موٹرسائیکل سواروں نے تھانہ ترنول کے علاقے میں واقع 26 ‏نمبرچوکی پرفائرنگ کرکے دو پولیس اہلکاروں کوشہید کردیا تھا۔ واقعہ کی تحقیقات ‏کےلیےدوانوسٹی گیشن ٹیمیں تشکیل دے دی گئیں۔ آئی جی اسلام آباد ‏عامرذوالفقارنے تفتیشی ٹیموں کے ہمراہ جائے وقوعہ کا دورہ بھی کیا اورتمام پہلوؤں ‏کا جائزہ لیا آئی جی اسلام آباد نے ہدایت کی کہ ملزمان کو تلاش کرنے کے لیے تمام ‏تر وسائل بروئے کارلائے جائیں۔

اس واقعے کے بعد سوشل میڈیا پرایک ویڈیو بھی وائرل ہوئی جس میں شہید پولیس اہل کاروں کی لاشوں کو ایمبولینس نہ ہونے کے باعث وین میں ڈالتے دیکھا جا سکتا ہے۔ آئی جی اسلام آباد محمد عامر ذوالفقار خان نے ویڈیو کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے متعلقہ ایس پی کی سخت سرزنش کی اور ڈی ایس پی صدر سے وضاحت طلب کرنے کے ساتھ ساتھ قائم مقام ایس ایچ او محمد رفیق، ڈیوٹی افسر عبدالغفوراورکانسٹیبل کو فوری طور پر معطل بھی کردیا۔

اس موقع پر آئی جی عامرذوالفقارنے کہا ہے کہ شہریوں کی جان و مال کی حفاظت کے لیے اسلام ‏آباد پولیس کا ہرافسراورجوان اپنا خون بہانے کوہردم تیارہے۔ ایسی بزدلانہ کاروائیوں ‏سے پولیس کے افسران و جوانوں کے حوصلے پست نہیں ہوں گے۔ قاتلوں کوجلد ‏گرفتارکرکے کیفرکردارتک پہنچائیں گے

متعلقہ خبریں

Leave a Comment