ہولی فیملی اسپتال میں نرسز کا احتجاج

راولپنڈی ۔ ہولی فیملی اسپتال میں 3 روز قبل جانبحق ہونیوالی سمیعہ کی ساتھی نرسز کا انصاف نہ ملنے پر احتجاج کیا، ساتھی نرسز کا کہنا تھا کہ سمیعہ کی طبیعت خراب ہوئی تو ہوسٹل وارڈن نے چیک اپ کیئے ہسپتال کی ایمرجنسی تک نہ جانے دیا اور شام کے ڈاکٹر نے نرس کے علاج پر کوئی توجہ نہ دی، ڈاکٹر نے ٹیسٹ کرایا اور کہا یہ ٹھیک ہیں اس کو لے جائیں خود ہی ٹھیک ہو جائیگی،

مظاہرین کا کہنا تھا کہ ڈاکٹرز اور انتظامیہ نرسز کے ساتھ علاج کے معاملے میں ناروا سلوک روا رکھتے ہیں، ڈاکٹروں کی جانب سے ہمیں بھی عام مریضوں کی طرح چیک اپ کیا جاتا ہے،ہم نرسز روزانہ مریضوں کا چیک اپ کرتی ہیں ڈاکٹرز صرف پرچی پر لکھ دیتے ہیں، ہم کورونا جیسے ماحول میں مریضوں کی دیکھ بھال کرتی ہیں۔

مظاہرین کا مزید کہنا تھا کہ ہمارے پیچھے بھی رونے والے ہیں لیکن ہم پھر بھی عوام کی خدمت کر رہے ہیں، اس سے قبل بھی ہماری ساتھی نرسز ایسے حادثوں کا شکار ہو چکی ہیں، ہم نہیں چاہتیں کہ مزید ہمارے ساتھ اس قسم کے حادثے پیش آئیں۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment