کپتان نے حکومتی کارکردگی جانچنے کا نیا پیمانہ اپنی ٹیم پر واضح کردیا

بریفنگ کی بجائے اب حقائق پر مبنی ریکارڈ کے زریعے کارکردگی ثابت ہوگی، وزیر اعظم نے کسی سے کوئی کوئی سمجھوتہ نہ کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے حکومتی کارکردگی جانچنے کا نیا پیمانہ اپنی ٹیم پر واضح کردیا ہے۔

 

حکومتی ذرائع کے مطابق حکومتی ٹیم کی کارکردگی کے معاملے پر وزیراعظم عمران خان نے اب کوئی سمجھوتہ نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے، اپنی ٹیم پر واضح کر دیا ہے کہ بریفنگ کی بجائے حقائق پر مبنی ریکارڈ کے زریعے کارکردگی ثابت ہوگی۔

 

وزراء، مشیران، معاونیں کو بریفنگ کے بجائے اب کاردگی دکھانا ہوگی، سیکریٹریز سمیت اداروں کے سربراہاں کو بھی کارکردگی کے پیمانے سے جھانچا جائے گے ، کارکردگی کی بنیاد پر ہی ٹیم کا حصہ رہا جا سکتا ہے۔

 

زرائع کا کہنا ہےکہ حکومتی فیصلوں پر کتنا عمل ہوا؟ اب حقائق بتانا ہوں گے، تاخیری حربے دکھانے والے وزراء اور بیوروکریسی کو رعایت نہ دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے ،، وزیر اعظم عمران خان وزارتوں سے بریفنگ میں اپنے ریکارڈ کے مطابق عملی اقدام کا پوچھنا شروع ہوگئے، وزیر اعظم نے تاخیری حربوں پر کئی افسران کی سرزنش بھی کی،صوبائی کابینہ اور افسر شاہی کو بھی اب کاکردگی کے ترازو پر تولہ جائے گا۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment