وفاقی پولیس کا اہلکار وردی کا ناجائز فائدہ اٹھانے لگ گیا

اسلام آباد:وفاقی پولیس کی وردی میں خواتین کو حراساں اور واداتیں کرنے کا انکشاف،ذیشان نامی اہلکار گھر میں اکیلی خواتین کو دیکھ کر چھاپے مارتا ہے۔

 

ذرائع کے مطابق وفاقی پولیس کا اہلکار ذیشان اپنی وردی کا ناجائز فائدہ اٹھاتے ہوئے غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث ہے، جس کے خلاف مختلف تھانوں میں مقدمات بھی درج ہیں۔

 

ذرائع کے مطابق پولیس اہلکار ذیشان خود کو کہیں آئی جی تو کہیں ڈی ایس پی کا ریڈر ظاہر کرتا ہے، ملزم ذیشان نیلور کے علاقے سے پولیس بھرتیوں کی آڑ میں فراڈ بھی کر چکا ہے،ملزم کیخلاف مقدمات تو درج ہیں لیکن وفاقی پولیس کے اعلی حکام ملزم کی پشت پناہی کرتے ہیں،

 

ذرائع نے بتایا ہے کہ گزشتہ رات مذکورہ اہلکار کی جانب سے نیلور کے علاقے میڈیکل سٹور پر غنڈا گردی کی گئی،غنڈہ گردی کے واقعہ میں پولیس اہلکار ذیشان نے آئی جی آفس کی دھونس جمائی اور گالیاں دیں، نیلور پولیس شہری کی بات سنے بغیر اہلکار کی درخواست پر مقدمہ درج کر لیا۔

 

ملزم ذیشان کیخلاف آئی جی اسلام آباد کا نام استعمال کر کے فراڈ کی درخواستیں بھی زیر تفتیش ہیں، ملزم ذیشان کے خلاف دونوں درخواستیں وزیراعظم پورٹل پر درج کروائی گئی ہیں۔

واضح رہے کہ یہ اسلام آباد پولیس کا اہلکار ذیشان پولیس ہیڈ کواٹر میں تعینات ہے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment