پائلٹس کے جعلی لائسنس اور ڈگریاں، رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کروا دی گئی

پائلٹس کے جعلی لائسنس اور ڈگریوں سے متعلق سول ایوی ایشن اتھارٹی کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرا دیا گیا۔

 

رپورٹ کہاگیاکہ پی آئی اےکے450 پائلٹس ہیں، پی آئی اےسمیت نجی ایئرلائنزکے1934پائلٹس کولائسنس جاری کیے، 16مشتبہ ڈگری والےپائلٹس میں سے8کومعطل کیا گیا، انکوائری بورڈنے 262پائلٹس کےمشتبہ لائسنس کی نشاندہی کی، جعلی لائسنس والےپائلٹس نےامتحان میں حصہ نہیں لیاتھا۔رپورٹ کےمطابق 54پائلٹس کےلائسنس معطل کرکےدوبارہ تصدیق کی جارہی ہے۔

 

رپورٹ کے مطابق پی آئی اے 141، سیرین 10 اور ایئربلیو کے 9 پائلٹس گراؤنڈکیے،پی آئی اے کے 6اورشاہین ایئرلائن کے2پائلٹس کی ڈگریاں جعلی نکلیں، وفاقی حکومت کومعطل54میں سے28پائلٹس کالائسنس منسوخ کرنےکی سمری بھیج دی ہے، مستقبل میں جعلی لائسنس سےبچنے اوربائیومیٹرک تصدیق کیلئےسی سی ٹی وی کیمروں سمیت نادرا کودرخواست بھیج دی ہے،

 

ایئربلیونےعدالت کوبتایا ہےکہ مشتبہ لائسنس یافتہ9میں سے7پائلٹس ایئربلیوچھوڑچکے ہیں، 100پائلٹس میں سے98کےلائسنس درست نکلے، ائیربلیوکےموجودہ85پائلٹس کےلائسنس درست ہیں، سیرین ایئر لائن کی رپورٹ کےمطابق28پائلٹس میں سےتمام کی ڈگریاں درست ہیں جبکہ6 کالائسنس مشتبہ نکلا جن کومعطل کرکےگراونڈکردیاگیاہے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment