پاک نیوی سیلنگ کلب، چئرمین سی ڈی اے اور نیول چیف کو نوٹس جاری

اسلام آباد ہائیکورٹ نے راول ڈیم کے کنارے پاکستان نیوی سیلنگ کلب کی تعمیر کے خلاف درخواست پر نوٹس جاری کر دیئے۔

 

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں سنگل بنچ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کیس کی سماعت کی، دوران سماعت عدالت نے راول ڈیم کے کنارے پاکستان نیوی سیلنگ کلب کی تعمیر کے خلاف چئیرمین سی ڈی اے کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 23 جولائی تک جواب طلب کر لیا، اسلام آباد ہائی کورٹ نے اٹارنی جنرل کو بھی 23 جولائی کے لیے نوٹس جاری کردیا۔

 

اسلام آباد ہائیکورٹ کا کہنا ہے کہ اہم نوعیت کا کیس ہے، اس کیس میں اٹارنی جنرل آئندہ سماعت پر عدالت کی معاونت کریں، چئیرمین سی ڈی اے آفیسر مقرر کرکے جگہ کا وزٹ کرائیں، سی ڈی اے عدالت کو آگاہ کرے کہ کس اتھارٹی کے تحت پاکستان نیوی کو جگہ الاٹ کی گئی۔

 

اسلام آباد ہائی کورٹ نے چیف آف نیول اسٹاف کو بھی نوٹس جاری کرتے ہوئے عدالت میں تحریری جواب جمع کرانے کی ہدایت کی۔

 

پاکستان نیوی کے سیلنگ کلب کی غیر قانونی تعمیر کے خلاف درخواست گزار کی وکیل زینب جنجوعہ ایڈووکیٹ بھی عدالت میں پیش ہوئیں۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment