اسلام آباد:تاجروں کا اپنے مطالبات کے لیے احتجاج

 

اسلام آباد : تاجر اور پولیس آمنے سامنے، ہارن بجاؤ حکمران جگاؤ تاجروں کی احتجاجی ریلی اسلام آباد میں داخل ہو گئی۔

 

تفصیلات کے مطابق وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں تاجروں کی احتجاجی ریلی ہارن بجاؤ حکمران جگاؤ ریلی اسلام آباد میں داخل ہو گئی ہے، احتجاجی ریلی کو اسلام آباد زیرو پوائنٹ پر پولیس نے روکے رکھا، پولیس نے تاجروں پر لاٹھی چارج بھی کیا، جس سے ریلی میں دھکم پیل سے کئی تاجر زخمی بھی ہوئے۔

 

تاجروں کی احتجاجی ریلی اس وقت سرینہ چوک پہنچ گئی ہے، جہاں پر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اگر حکومت نے ھمارے مطالبات نہ مانے تو حکمران بھگاو تحریک شروع کریں گے، یہ حکمران اتنے نااہل لوگ ہیں انہیں ریگستان میں بھیجو تو ریت کا اور سمندر میں بھیجو پانی کا بہران پیدا کر دیں، یہ ہمارا آئینی حق ہے کہ ریاست ہمیں ایک اچھی حکومت دے، یہ اچھی حکومت نہیں ایک بری حکومت ہے، چار ماہ میں بند سیکٹرز کے لئے ایس او پیز نہیں بنائی جا سکیں، ہم نے چھوٹے تاجروں کو بلا سود قرضے کا مطالبہ کیا ہے، ہم 31 جولائی تک کا وقت دے کر جا رہے ہیں، اگر 31 جولائی تک ہمارے مطالبات نہ مانے تو پھر حکمران بھگاو تحریک چلائیں گے، وفاقی حکومت تاجروں ک استحصال بند کرے، ہفتے میں ایک دن مارکیٹیں بند ہوتی ہیں دو دن بند کرنا سمجھ سے باہر ہے، ہمیں بتایا جائے کہ ہمارے ساتھ ایسا سلوک کیوں ہورہا ہے،شادی ہالز اور ریسٹورنٹس بھی فوری کھولے جائیں،دنیا بھر میں تقریبا ہر شعبہ اپنا کام کررہا ہے، سکولز کالجز کو بھی فوری کھولا جائے۔

 

دوسری طرف وفاقی پولیس نے سرینہ چوک پر واٹر کینن اور بکتر بند گاڑیوں کو پہنچا دیا ہے، کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لئے پولیس کی بھاری نفری کو بھی مزید الرٹ کردیا گیا ہے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment