فیصل واوڈا نااہلی کیس:الیکشن کمشنر نے یکطرفہ فیصلہ دینے کا عندیہ دے دیا

وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا کے خلاف مبینہ دہری شہریت چھپانے کےمعاملے پر الیکشن کمیشن میں سماعت، فیصل واڈا  کی جانب سے الیکشن کمیشن کے سامنے کوئی پیش نہ ہو سکا۔الیکشن کمشنر نے یکطرفہ فیصلہ دینے کا عندیہ دے دیا۔

 

 

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا کے خلاف مبینہ دہری شہریت رکھنے پر نااہلی کےلئے دائر 4 درخواستوں پر سماعت چیف الیکشن کمیشنر کی سربراہی میں 5 رکنی کمیشن نے کی،فیصل واوڈا کی جانب سے کوئی بھی الیکشن کمیشن میں پیش نہ ہوا، الیکشن کمیشن نے درخواستگزاروں سے درخواست قابل سماعت ہونے سے متعلق جواب طلب کر لیا۔

 

چیف الیکشن کمشنر نے درخواست گزاروں کو حکم دیا ہے کہ آئندہ سماعت پر  جواب جمع کرا کے دلائل دیں، درخواستگزاروں کو جواب جمع کرانے کے لیے 15 دنوں کی مہلت دی گئی ہے، الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ اگر فیصل واڈا کی جانب سے آئندہ سماعت پر کوئی پیش نہ ہوا تو یکطرفہ کارروائی کریں گے،فیصل واوڈا کے وکیل نے گزشتہ سماعت پر درخواستوں کے قابل سماعت ہونے پر اعتراض عائد کیا تھا۔

 

 

متعلقہ خبریں

Leave a Comment