سپریم کورٹ:این ایچ اے سے لیز پر دی گئی زمینوں کا ریکارڈ طلب

سپریم کورٹ میں لاہور میں پٹرول پمپس کی لیز سے متعلق ازخودنوٹس کی سماعت، عدالت نے ملک بھر میں جی ٹی روڈز کے اطراف دی گئی لیزز کی تفصیلات طلب کر لیں،

 

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے لاہور میں پٹرول پمپس کی لیز سے متعلق ازخودنوٹس کی سماعت کی، سپریم کورٹ نے حکم دیا ہے کی کس کو کن شرائط پر اور کب سے لیز دی گئی تمام ریکارڈ پیش کیا جائے، چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ جی ٹی روڈ این ایچ اے کی ملکیت نہیں ہے،این ایچ اے زمین کا مالک نہیں تو لیز پر کیسے دے سکتا ہے۔

 

این ایچ اے کے وکیل نے کہا کہ سڑک کے اطراف 220 فٹ جگہ این ایچ اے کی ہے، جسٹس اعجاز الاحسن نے ریمارکس دیے کہ این ایچ اے کو زمین سڑک کی تعمیر، مرمت اور توسیع کیلئے دی گئی،این ایچ اے کے قواعد قانون کیخلاف ہوئے تو کالعدم ہو جائینگے، تمام پٹرول پمپس، ہوٹلز اور ریسٹورنٹس کو دی گئی زمین کی تفصیلات اور این ایچ اے کی جانب سے جاری تمام لائسنسوں کی تفصیلات بھی طلب کر لی ہیں۔

 

عدالت نے چیئرمین این ایچ اے کو آئندہ سماعت پر ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا ہے۔اٹارنی جنرل اور ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کو بھی نوٹس جاری کر دیا گیا ہے، کیس کی سماعت دو ہفتے کیلئے ملتوی کر دی گئی۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment