پاکستان : 5 آگست یوم استحصال کشمیر کی تیاریاں عروج پر

آرٹیکل 370 ختم ، بھارت کا جابرانہ اقدام ، مقبوضہ کشمیر میں ظلم کی انتہا ، کرفیو، قتل ، قید اور زندگی مفلوج ، مودی سرکارکی کشمیر کی شناخت ختم کرنے کی سازش کو ایک سال ہونے کو ہے، پاکستان میں پانچ اگست یوم استحصال کشمیر کی تیاریاں عروج پرہیں۔

شدت پسند بھارتی حکومت کی جانب سے آرٹیکل 370 ختم، جنت نظیر وادی پرقبضہ، مقبوضہ کشمیر پر مظالم کی انتہا، کریک ڈاؤن، قتل عام، اور محاصرے کو ایک برس مکمل ہو گیا۔گزشتہ سال 5 اگست کو بھارت نے کشمیر کی شناخت چھیننے اور ضم کرنے کی کوشش کی۔ بھارتی اقدامات کے خلاف ملک بھرمیں یوم استحصال کشمیرماننے کی تیاری عروج پرہے ، وفاقی دارلحکومت کی اہم شاہراہوں پر کشمیر جھنڈوں اور بینر سے سجا دیا گیا۔

پاکستانی شہریوں کا کہنا ہے کہ کشمیرکو 3 حصوں میں تقسیم کرنے کی سازش ہوئی ہندو پنڈت، لداخ کا بدھ مت اور وادی کا مسلمان، کشمیر کے تمام مکاتب فکر نے کشمیر کی تقسیم کو قبول نہیں کیا۔

شہریوں کا مزید کہنا ہے کہ پاکستانی شہری عالمی طاقتوں سے وادی میں جاری مظالم ختم کرانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ تحریک آزادی میں کشمیری بھائیوں کے ساتھ تمام پاکستانی کندھے کے ساتھ کندھا ملا کر کھڑے ہیں۔شہریوں کا کہنا ہے کہ کہ جب سے ھم نےہوش سنبھالا کشمیر کو سلگھتا ہی دیکھ رہے ہیں ،مقبوضہ وادی کی تحریک آزادی اپنی منزل کے قریب ہے ۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment