سانحہ اے پی ایس کے ذمہ داران کو نہیں چھوڑیں گے:سپریم کورٹ

سپریم کورٹ میں سانحہ آرمی پبلک سکول حملہ از خود نوٹس کیس کی سماعت، چیف جسٹس گلزار احمد نے کہا کہ سانحہ اے پی ایس کے ذمہ داران کو نہیں چھوڑیں گے۔عدالت نے انکوائری رپورٹ پر اٹارنی جنرل کو حکومت سے ہدایات لینے کا حکم دیدیا۔

سپریم کورٹ میں سانحہ آرمی پبلک سکول از خود نوٹس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ غفلت کے مرتکب افراد کیساتھ قانون کے مطابق نمٹیں گے، عدالت نے واضح کیا کہ اٹارنی جنرل کے جواب کی روشنی میں کیس آگے بڑھائیں گے۔

ایک شہید بچے کی والدہ نے عدالت میں سماعت کے دوران یہ کہا کہ پاکستان میں ہمارے بچے محفوظ نہیں جس پر جسٹس اعجاز الاحسن نے والدین کو تسلی دیتے ہوئے کہا کہ اعتماد رکھیں سپریم کورٹ حق اور انصاف کی بات کرے گی۔ چیف جسٹس نے کہا کہ شرپسند سکول میں داخل ہوئے اور بچوں کو شہید کیا۔ عدلیہ آپکی محافظ ہے۔ پاکستان میں صرف قانون کی حکمرانی ہے۔

عدالت نے آئندہ سماعت پر اٹارنی جنرل کو ذاتی حیثیت میں پیش ہونے کا حکم دیتے ہوئے سماعت چار ہفتے کے لیے ملتوی کر دی۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment