نیب کا سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے خلاف ضمنی ریفرنس دائر

نیب نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے خلاف ضمنی ریفرنس دائر کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق نیب نے ایل این جی ضمنی ریفرنس دائر کر دیا جس میں شاہد خاقان عباسی کے بیٹے عبداللہ خاقان، شاہد عباسی کی ایئرلائن کے ایم ڈی چوہدری اسلم سمیت پانچ مزید کو ملزم نامزد کر دیا ہے۔

ضمنی ریفرنس کے مطابق ملزمان نے ایل این جی کا غیرقانونی ٹھیکہ دیا اور شاہد خاقان عباسی نے عوامی عہدے اور اختیارات کا ناجائز استعمال کیا، نجی کمپنی کو ایل این جی ٹھیکہ دے کر ایک ارب روپے کا فائدہ پہنچایا گیا، جس سے آئندہ دس سال میں 47 ارب روپے کا نقصان ہو گا۔

ایل این جی ریفرنس پر سماعت جج اعظم خان کی رخصت پر ہونے کے باعث بغیر کارروائی ملتوی کردی گئی۔ عدالتی عملے کی جانب سے ریفرنس کے شریک ملزمان کی حاضری لگائی گئی۔

احتساب عدالت میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ دو سال پہلے نیب کو تمام بینکنگ ٹرانزیکشنز کا ریکارڈ دے چکا ہوں۔ چیئرمین نیب سے پوچھوں گا کہ ٹیکس پیڈ پیسے سے منی لانڈرنگ کیسے ہوتی ہے۔

شاہد خاقان عباسی نے مزید کہا کہ مولانا فضل الرحمن سے مشاورت میں کمی رہنے پر انکا شکوہ جائز ہے لیکن جو بل منظور کرائے گئے وہ قومی مفاد میں تھے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment