اراکین اسمبلی ہر بل کو تنقید سے پہلے گھر سے پڑھ کر آئیں، وزیر قانون پنجاب

راجہ بشارت نے کہا کہ بل منظور ہونے کے بعد اعتراضات آئے جس کی وجہ سے بل کو گورنر کے پاس منظوری کے لیے نہیں بھیجا ہے۔

پنجاب کے صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت کا ایوان میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب اسمبلی تحفظ بنیاد اسلام بل منظور ہونے کے بعد اس پر اعتراضات آئے تھے، جس پر بل کو گورنر کی منظوری کے لیے نہیں بھیجا گیا، بل پر تحفظات کو دور کرنے کے لیے علماء کی رائے سے ترامیم کریں گے۔

وزیر قانون نے کہا کہ ایوان کو یقین دلاتا ہوں جب تک بل پر اتفاق رائے نہیں ہوتا،تب تک کوئی پیش رفت نہیں ہوگی، حکومت کی خواہش ہے کہ اس بل پر مکمل اتفاق رائے ہو، ارکان اسمبلی کا فرض ہے کہ وہ ہر بل کو تنقید سے پہلے گھر سے پڑھ کر آئیں، یہ ہر قانون ساز ممبر کا یہ فرض ہے کہ وہ اپنا کردار ادا کرے۔

راجہ بشارت کے بیان پر حکومتی ارکان سیخ پا ہوگئےہم آپ پر اعتماد کرتے ہیں اس لیے پڑھے بغیر اسے منظور کرایا، آئندہ ایسا ہرگز نہیں کریں گے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment