سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے زیراہتمام جسٹس( ر) سردار اسلم مرحوم کی یاد میں تعزیتی ریفرنس

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے زیراہتمام جسٹس ریٹائرڈ سردار اسلم مرحوم کی یاد میں تعزیتی ریفرنس سے خطاب میں جسٹس عمر عطاء بندیال نے کہا کہ رول ماڈلز کو کبھی بھلایا نہیں جاسکتا۔

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام اسلام بار ہائی کورٹ کے سابق چیف جسٹس سردار اسلم مرحوم کی یاد میں تعزیتی ریفرنس کا انعقاد کیا گیا۔

تقریب میں اسلام آباد ہائی کورٹ اور سپریم کورٹ کے ججز اور سپریم کورٹ بار کے عہدیداران سمیت سنئیر وکلا نے بھی کثیر تعداد میں شرکت کی۔ تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سپریم کورٹ کے جج جسٹس عمر عطاء بندیال نے کہا کہ معاشرے میں علمیت اور برداشت کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔

سردار اسلم مرحوم نے خود کو اپنے عمل کے ذریعے ایک عظیم انسان ثابت کیا اور بحثیت جج ہمیشہ تحمل و بردباری کا مظاہرہ کیا۔ اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ کا اپنے خطاب میں کہنا تھا کہ سردار اسلم مرحوم عاجزی و انکساری کا عظیم نمونہ تھے ۔ آپ کے بحثیت جج یادگار فیصلے ہمیشہ یاد رکھے جائینگے۔

تعزیتی سمینار سے آزاد کشمیر سپریم کورٹ کے قائم مقام چیف جسٹس راجہ سعید اکرم، جسٹس فیاض جندران اور سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر سید قلب حسن سمیت سنئیر وکلا نے بھی خطاب کیا۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment