سندھ کے خلاف سازش، پیپلز پارٹی کا بڑا اعلان

پاکستان کے تجارتی حب کراچی کو وفاق کے حوالے کرنے کی تجویز کے خلاف سندھ کے مختلف شہروں میں سندھ کی حکمران جماعت پیپلز پارٹی نے احتجاجی مظاہرے کیے اور ریلیاں نکالیں۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے کارکنوں نے اندرون سندھ میں خیر پور، دادو، جیکب آباد، میر پور خاص،اوباڑو، ٹنڈو محمد خان اور سجاول میں احتجاجی مظاہرے کئے۔ پیپلز پارٹی کے کارکنوں نے  کشمور ہائی وے پر بھی دھرنا دیا ورٹریفک کو بلاک کردیا۔ کراچی،حیدرآباد، سکھر، لاڑکانہ اور نواب شاہ میں بھی احتجاجی مظاہرے کیے جارہے ہیں۔ احتجاج میں پیپلز پارٹی کی مقامی قیادت اور کارکنوں نے شرکت کی جب کہ خواتین کارکنوں کی بڑی تعداد بھی احتجاج میں شریک ہوئی۔

مظاہرین کا کہنا ہےکہ کراچی کو وفاق کے حوالے کرنے کی سازش کامیاب نہیں ہونےدیں گے اور اٹھارویں ترمیم پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔پیپلزپارٹی کے رہنما نفیسہ شاہ نے کہا کہ سندھ نے ملک کے لیے بڑی لیڈرشپ دی ہے. سندھ نے سب سے پہلے پاکستان کی قرار داد پاس کی تھی۔ انہوں نے مزید کہا کہ سندھ پاکستان بنانے والا تھا اور بچانے والا ہے. ہم کسی صورت سندھ کے خلاف سازش برداشت نہیں کریں گے۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں پریس کلب کے باہر بھی عاجز دھامرا کی سربراہی میں پیپلز پارٹی کی جانب سے احتجاج کیا گیا۔

خیال رہے وفاقی حکومت کے رہنماؤں اور اٹارنی جنرل آف پاکستان کی طرف سے ایسے بیانات سامنے آئے ہیں جن میں کہا گیا ہے کہ سندھ کی صوبائی حکومت کراچی کے مسائل حل کرنے میں ناکام رہی ہے اور کراچی کے حوالے سے وفاقی حکومت مختلف آئینی اور قانونی پہلوؤں پر سنجیدگی سےغور کررہی ہے جس کی تفصیل ابھی نہیں بتائی جاسکتی۔ 

گورنر سندھ عمران اسماعیل کی جانب سے بھی ایسے ہی بیانات کے بعد پیپلز پارٹی کی جانب سے سخت ردعمل دیکھنے میں آیا اور پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ  وفاقی حکومت سندھ کو کالونی بناکر سندھ کے دارالحکومت پر قبضہ کرنا چاہتی ہے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment