نفرت انگیز مواد نشر کرنے پر 24 نیوز کا لائسنس معطل

پیمرا نے 10 محرم الحرام کی خصوصی ٹرانسمیشن کے دوران نفرت انگیزمواد نشر کرنے پر24 نیوزکا لائسنس فوری طور پر معطل کر دیا۔ 

پیمرا نے مورخہ 20اگست 2020ء کو تما م ٹی وی چینلزکو محرم الحرام کے حوالے سے ایڈوائزری جاری کی تھی اور چینلز کو اپنی نشریات کے دوران ایسا مواد جو کہ بین المذاہب ہم آہنگی کو ٹھیس پہنچائے یانفرت انگیز ی اور فرقہ واریت پر مبنی ہو، نشر نہ کرنے کی ہدایت کی تھی۔

میسرز سینٹرل میڈیا نیٹ ورک پرائیویٹ لمیٹڈ (24 نیوز) نے دس محرم الحرام کی خصوصی ٹرانسمیشن کے دوران نفرت انگیز مواد بغیر کسی ایڈیٹوریل کنٹرول کے نشر کیا اور پیمرا قوانین کی صریحاً خلاف ورزی کی۔ پیمرا کو سوشل میڈیا پر اس مواد کے خلاف شکایت موصول ہوئیں ہیں جس پر اتھارٹی نے فوری کاروائی کرتے ہوئے پیمرا آرڈیننس کے سیکشن 30 (3) کے تحت 24 نیوزکا لائسنس معطل کر دیا ہے کیوں کہ نشر کیے گئے نفرت انگیز موادسے ملک بھر میں نقص امن کا اندیشہ ہے۔ 

مزید براں، 24 نیوز کو اظہار وجوہ کا نوٹس جاری کرتے ہوئے 14روز میں جواب دہی کا حکم دیا ہے اور قانون کے مطابق چنیل کوذاتی شنوائی کا موقع فراہم کیا گیا ہے۔چینل کا لائسنس انکوائری مکمل ہونے تک معطل رہے گا۔

دوسری جانب 24 نیوز چینل کی انتظامیہ کا بھی  پیمرا کے مزکورہ ایکشن پر موقف سامنے آیا ہے۔24 چینل کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ جلوس میں پڑھی جانے والی دعا عربی میں تھی جس کے مفہوم کو چینل کا عملہ جانچ نہیں سکا۔

چینل کی انتظامیہ کا مزید کہنا ہے کہ ادارہ اس نادانستہ غلطی پر معافی مانگتا ہے۔ کسی بھی مکتبہ فکر کی دل آزاری کرنا بلکل بھی مقصود نہیں تھا،۔ ادارہ اہل بیت علیہ السلام اور صحابہ کرام رضی اللہ تعالٰی عنہ کے خلاف گستاخانہ مواد کی ھمیشہ مذمت کرتا ہے اور کرتا رہے گا۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment