ایف اے ٹی ایف بارے قانون سازی حکومت کے لیے نیا دردِ سر

ایف اے ٹی ایف بارے قانون سازی کیسے کی جائے حکومت کے لیے درد سر بن گیا،پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں بھی حکومت کو ایف اے ٹی ایف بارے قانون سازی پر کامیابی نہ ملنے کا خدشہ ہے۔

ذرائع کے مطابق ایف اے ٹی ایف بارے قانون سازی کے لیے حکومت نے اپوزیشن کے سینئر رہنماؤں سے رابطے شروع کر دیئے ہیں۔ اینٹی منی لانڈرنگ سمیت دیگر اہم قانون سازی کے لئے حکومت کو حزب اختلاف کی ضرورت ہے۔ قومی اسمبلی میں کثرت رائے سے بل منظور کروانے کے باوجود حکومت سینیٹ میں قانون سازی کرانے میں ناکام رہی ہے۔

ذرائع کا مزید کہنا ہے قومی اسمبلی اور سینیٹ کے شیڈول اجلاس بھی اسی وجہ سے آگے بڑھائے گئے۔ حکومت دونوں ایوانوں سے مکمل یا کثیر اتفاق رائے سے قوانین منظور کرانے کی کوشش کر رہی ہے۔ 

ذرائع کے مطابق سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر، وزیر دفاع پرویز خٹک، وزیر پارلیمانی امور علی محمد خان اور وزیر خوراک و زراعت فخر امام کے ذریعے رابطے کئے جارہے ہیں۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment