سگی بیٹیوں سے زیادتی کرنے والے باپ کی درخواست ضمانت مسترد

اسلام آباد ہائی کورٹ نے دو بیٹیوں سے ساتھ زیادتی کرنے والے درندہ صفت حقیقی باپ کی ضمانت پر رہائی کی درخواست مسترد کر دی ہے۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ نے دو بیٹیوں سے ساتھ زیادتی کرنے والے درندہ صفت باپ جہانزیب کی درخواست ضمانت پر سماعت کی ۔ عدالت کو بتایا گیا کہ مقدمہ کی مدعیہ اور ملزم کے مابین صلح نامہ ہو گیا ہے ۔بیٹیوں کے ساتھ زیادتی کرنے والے باپ کے خلاف متاثرہ بچیوں کی ماں کی مدعیت میں تھانہ کورال میں مقدمہ درج کیا گیا تھا ۔ ایف آئی آر کے مطابق 15 سالہ عظمی اور 17 سالہ صفیہ کو ان کا حقیقی باپ زیادتی کا نشانہ بناتا رہا۔

پولیس کے مطابق میڈیکل رپورٹ میں بھی باپ کی اپنی بیٹیوں سے زیادتی ثابت ہوئی۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے استفسار کیا، کیا یہ گھناؤنا جرم کرنے والا ضمانت کا مستحق ہے ؟ سرکاری وکیل نے کہا کہ صلح کے باوجود ملزم ضمانت کا مستحق نہیں۔ جس پرعدالت نے ضمانت مسترد کرتے ہوئے ٹرائل کورٹ کو بھی مقدمہ کا جلد فیصلہ سنانے کی ہدایات جاری کر دیں۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment