نواز شریف کے دور حکومت میں غربت کم، حکومت کا اعتراف

حکومت نے نواز شریف کے حالیہ دور حکومت میں غربت کی شرح کم ہونے کا اعتراف کر لیا۔

قومی اسمبلی میں وزارت منصوبہ بندی نے تحریری جواب میں نواز شریف کے حالیہ دور حکومت میں غربت کی شرح کم ہونے کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ سال 2016 میں غربت کی شرح میں نمایاں کمی ہوئی۔ موجودہ دور میں غربت کی شرح کم ہوئی یا بڑھی اعداد و شمار موجود نہیں، سال 2016 کے بعد قومی سطح پر غربت کے حوالے سے کوئی سروے نہیں ہوا۔

قومی کمیشن پاکستان کی غربت رپورٹ برائے 2015/16 میں غربت کی سطح میں کمی کی نشاندہی کی گئی۔ رپورٹ کے مطابق پاکستان میں غربت کی سطح سال 1998 میں 57 اعشاریہ 9 فیصد تھی،سال 2015 میں غربت کی سطح کم ہو کر 24 اعشاریہ 3 فیصد رہ گئی تھی۔

دوسری جانب وزیر سول ایوی ایشن غلام سرور خان  نے قومی اسمبلی میں تحریری جواب میں بتایا پورپین سیکٹرز پر پی آئی اے کا فلائیٹ آپریشن بند ہونے سے 28 کروڑ روپے نقصان ہوا۔ یورپی سیکٹرز پر 1.69 ارب کے بجائے 1.41 ارب روپے ریونیو ہوا۔ پی آئی اے کو یہ نقصان جولائی تا اگست 2020 ہوا،تاہم برطانیہ سیکٹر پر 52 کروڑ روپے منافع کمایا گیا۔

وزیر ہوا بازی ڈویژن کی جانب سے تحریری جواب میں مزید بتایا گیا ہے کہ پی آئی اے طیارے کے کراچی میں حادثہ سے شہرت کو دھچکہ لگا ہے۔ پی آئی اے کے مسافروں میں شدید کمی ہوئی ہے،اصل اثرات کا تعین مزید چند ماہ گزرنے کے بعد ہی ممکن ہےجبکہ پی آئی اے کے کراچی حادثہ سے پریمیم کی کاسٹ میں اضافہ ہو گا۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment