چیئرمین پی ٹی وی راشد خان کی تعیناتی غیر قانونی قرار

وزیراعظم عمران خان کے قریبی دوست راشد علی خان سے متعلق اہم ترین انکشافات سامنے آئے ہیں۔ 

 اسلام آباد ہائیکورٹ نے پی ٹی وی میں تعیناتیوں کیخلاف اسلام آباد ہائیکورٹ کا تفصیلی فیصلہ جاری کر دیا۔ چیئرمین پی ٹی وی راشد خان اور بورڈ کے انڈیپنڈنٹ ڈائریکٹر راشد خان کی تعیناتیاں غیرقانونی قرار دیتے ہوئے عہدوں سے ہٹانے کا حکم دیدیا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے پی ٹی وی بورڈ کے انڈیپنڈنٹ ڈائریکٹر راشد خان کی تقرری کارپوریٹ گورننس رُولز 2013 کی خلاف ورزی پر کالعدم قرار دید۔، راشد خان پی ٹی وی کے علاوہ بنک آف خیبر اور نمل یونورسٹی میانوالی سمیت 9 کمپنیوں میں ڈائریکٹر ہیں۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے تحریری فیصلے میں لکھا کہ راشد خان اس انٹرنیٹ کمپنی میں بھی ڈائریکٹر ہیں جس کو پی ٹی وی سے ماہانہ سبسکرپشن فیس ملتی ہے۔ اپنی ہی کمپنی کے پی ٹی وی سے کاروباری تعلقات رکھنے والے راشد خان کی تعیناتی غیر قانونی قرار دی جاتی ہے۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے چیئرمین پی ٹی وی راشد خان سمیت پی ٹی وی بورڈ کے تمام انڈیپنڈنٹ ڈائریکٹرز کو عہدے سے ہٹانے کا حکم دیا ہے،جبکہ عدالت نے ایم ڈی پی ٹی وی عامر منظور اور ہیڈ آف نیوز اینڈ کرنٹ افیئرز قرنطینہ حسین کی تعیناتی قانون کے مطابق قرار دیتے ہوئے برقرار رکھی ہے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment