خورشید شاہ کی درخواست ضمانت پر سماعت 5 اکتوبر تک ملتوی

سپریم کورٹ نے رہنما پیپلز پارٹی خورشید شاہ کی ضمانت کی درخواست پر سماعت 5 اکتوبر سے شروع ہونے والے ہفتے تک ملتوی کر دی۔

سپریم کورٹ میں رہنما پیپلز پارٹی سید خورشید شاہ کی درخواست ضمانت پر سماعت جسٹس عمر عطا بندیال کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے کی۔ عدالت نے حکم دیا کہ آئندہ سماعت کے لئےخصوصی بنچ تشکیل دیا جائیگا۔ وکیل نیب نے عدالت کو بتایا کہ ہم نے ضمانت پر رہا ہونے والے شریک ملزمان کے خلاف اپیلیں دائر کی ہیں۔ درخواست گزار کی جانب سے بھی دو درخواستیں دائر کی گئی ہیں۔ جمع کرائی گئی دو درخواستوں کی کاپی ہمیں نہیں ملی۔ ہمارے سینئر پراسیکیوٹر جہانزیب بھروانہ اس کیس میں پیش ہونگے۔

سید خورشید شاہ کی جانب سے رضا ربانی عدالت میں پیش ہوئے اور کہا اس کیس کے 7 ہزار صفحات ہیں ، 12 املاک اور بنک اکاؤنٹس کا کیس ہے۔ میرا موکل ایک سال سے زیر حراست ہے، درخواست ہے کہ آئندہ سماعت فوری طور پر کریں۔

جسٹس عمر عطا بندیال نے ریمارکس دیے آپ اپنے دلائل کا خلاصہ آئندہ سماعت سے پہلے دائر کریں، ہم یہ کیس سننا چاتے ہیں لیکن نیب کو وقت درکار ہے۔ میاں صاحب آپ چاہتے ہیں کہ آپ کے دلائل سن کر انجوائے کریں۔

جسٹس عمر عطا بندیال نے کہا 5 اکتوبر سے شروع ہونے والے ہفتےمیں سماعت کا آرڈر کر دیتے ہیں۔ اس ہفتے میں بیشتر بنچ کوئٹہ رجسٹری میں ہونگے۔ اس کیس کے لئے خصوصی بنچ بنایا جائیگا۔ ہم نیب کو نوٹس کر دیتے ہیں۔ کیس کی سماعت 5 اکتوبر سے شروع ہونیوالے ہفتے تک ملتوی کر دی گئی۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment