موٹروے ریپ کیس: مرکزی ملزم عابد کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر پولیس کے حوالے

موٹروے واقعہ کے مرکزی ملزم عابد کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دے دیا گیا، ملزم کو شناخت پریڈ کیلئے جیل منتقل کردیا گیا۔

موٹر وے واقعہ میں ملوث مرکزی ملزم عابد کو 13 اکتوبر منگل کے روز لاہور کی مقامی عدالت میں پیش کیا گیا۔ کرائمز انٹیلی جنس ایجنسی (سی آئی اے) ماڈل ٹاؤن کی ٹیم نے موٹر وے زیادتی کیس کے مرکزی ملزم عابد ملہی کو سخت سیکیورٹی میں عدالت میں پیش کیا۔ ٹیم کی سربراہی ایس پی سی آئی اے عاصم افتخار نے کی۔

انسداد دہشت گردی کی عدالت کے جج ارشد حسین بھٹہ نے کیس کی سماعت کی جس میں پولیس نے کیس کی ابتدائی رپورٹ عدالت میں پیش کی۔ اس موقع پر پولیس کی جانب سے ملزم عابد کے ریمانڈ کی استدعا کی گئی۔ عدالت نے کیس پر مختصر سماعت کے بعد ملزم عابد ملہی کو شناخت پریڈ کیلئے 14 روز کیلئے جیل بھیجنے کا حکم دیا۔

گزشتہ ماہ 9 ستمبر کو لاہور سیالکوٹ موٹرے وے پر بچوں کے سامنے ماں کا ریپ اور لوٹ مار کرنے والے مرکزی ملزم کی گرفتاری کی خبر 12 اکتوبر کو منظر عام پر آئی، جس کی تصدیق وزیراعظم کے معاون خصوصی شہباز گل نے بھی ٹوئٹر پر کی۔ ملزم عابد کو فیصل آباد سے گرفتار کیا گیا۔

عدالتی حکم پر ملزم عابد علی کو شناخت پریڈ کیلئے جیل بھیجا جائے گا۔ واقعہ میں ملوث دوسرے ملزم شفقت کو 28 اکتوبر تک جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے سپرد کردیا گیا ہے۔ ملزم شفقت کی شناخت پریڈ ہوچکی ہے۔

واضح رہے کہ ملزم کی گرفتاری کیلئے شیخوپورہ، قصور سمیت پنجاب کے 70 سے زائد مقامات پر چھاپے مارے گئے۔

متعلقہ خبریں

Leave a Comment