اسلام آباد کا کاون ہاتھی 29 نومبر کو کمبوڈیا بھیجا جائے گا

شہر اقتدار کے چڑیا گھر کا کاون ہاتھی اسلام آباد میں بس چند روز کا مہمان رہ گیا، کاون ہاتھی کی کمبوڈیا روانگی سے قبل مرغزار چڑیا گھر میں الوداعی تقریب کا اہتمام کیا گیا۔

نعیم بخاری چئیرمین پی ٹی وی مقرر

وزارت اطلاعات و نشریات نے نعیم بخاری کی بطور چئیرمین پی ٹی وی تعیناتی کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا۔نوٹیفکیشن کے مطابق نعیم بخاری کو تین سال کے لیے چئیرمین پی ٹی وی تعینات کیا گیا۔

شریف برادران کی والدہ کی نماز جنازہ بدھ کو ادا کی جائے گی

نوازشریف اور شہبازشریف کی والدہ بیگم شمیم کی نماز جنازہ بدھ کو لندن میں ادا کی جائےگی۔
بیگم شمیم اختر کی میت کو پاکستان روانگی سے قبل نماز جنازہ ریجنٹ پارک مسجد میں ادا کی جائے گی۔
بیگم شمیم اختر کی میت کاغذی کارروائی کے بعد پاکستان روانہ کی جائے گی۔ نوازشریف کی  ہمشیرہ  بھی والدہ کی میت کے ساتھ پاکستان آئیں گی۔
لندن میں نواز شریف کی والدہ کی میت کو ریجنٹ پارک مسجد کے سرد خانہ منتقل کر دیا گیا ہے۔ کاغذی کارروائی مکمل ہونے کے بعد میت پاکستان روانہ کی جائے گی۔ بیگم شمیم اختر کی میت پاکستان بھجوانے میں دو سے تین دن لگ سکتے ہیں۔
پاکستان میں بیگم شمیم اختر کی نماز جنازہ شریف میڈیکل سٹی میں ادا کی جائے گی۔ مرحومہ کو لاہور میں سپرد خاک کیا جائے گا۔
خاندانی ذرائع کے مطابق بیگم شمیم اختر کو الزائمر کی بیماری لاحق تھی اور ان کے سینے میں شدید انفیکشن ہوگیا تھا۔
لیگی  رہنما عطا اللہ تارڑ نے کہا نوازشریف   ڈاکٹرز کی ہدایت  ملنے تک  وطن واپس نہیں آسکیں گے۔ شہباز شریف اور حمزہ شہباز کی پیرول کی درخواست  ڈپٹی کمشنر کو جمع کرا دی گئی ہے۔
درخواست میں کہا گیا ہے کہ شہباز شریف کو والدہ اور حمزہ شہباز کو دادی کی آخری رسومات میں شرکت کے لیے دو ہفتے کے لیے رہا کیا جائے۔

وزیر تعلیم سندھ کا بچوں کے امتحانات کے حوالے سے بڑا فیصلہ

وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی زیر صدارت چاروں صوبائی وزرائے تعلیم کا اجلاس ہوا جس میں کورونا کی موجودہ صورت حال میں اسکولوں کی بندش کے حوالے سے تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

سعودی عرب میں اسرائيلی وزير اعظم کی بڑی خفیہ ملاقات

اس تاريخی دورے اور خفيہ ملاقات کے بارے ميں رپورٹيں آج بروز پير اسرائيل کے متعدد اخبارات ميں چھپی ہيں۔ البتہ فوری طور پر نيتن ياہو کے دفتر سے اس کی تصديق نہيں ہو پائی۔

نئے امریکی صدر جو بائیڈن عافیہ صدیقی کی رہائی ممکن بنائیں گے

انھوں نے مزید کہا کہ نئے امریکی صدر سے امید ہے وہ عافیہ صدیقی کی رہائی ممکن بنائیں گے، بیرون ملک پاکستانیوں کےمسائل کاحل پی ٹی آئی حکومت کی ترجیح ہے۔

کراچی کے سرکاری اسپتال کورونا کیسز سے بھر گئے

میڈیا کی رپورٹس کے مطابق کراچی کے سرکاری اسپتالوں میں کورونا کے مریضوں کے لئے جگہ کم پڑنا شروع ہوگئی جس کے  بعد شہری نجی اسپتالوں میں جانے پرمجبورہوگئے جہاں داخلے سے قبل لاکھوں روپے وصول کئے جارہے ہیں۔

پارلیمانی سرگرمیاں منسوخ کرنے کے معاملے پر پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس طلب

ذرائع کے مطابق 25نومبر کو ہونے والے اجلاس میں پارلیمانی سرگرمیاں بحال کرنے سے متعلق فیصلہ کیاجائیگا جبکہ پارلیمٹ میں کروونا ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد پر کرانے پر بھی اتفاق کیا جائے گا۔

بھارتی اشتعال انگیزیاں خطے میں امن و سلامتی کے لیے خطرہ ہیں، پاکستان

ایل او سی پر بھارتی افواج کی جانب سے سیز فائر کی خلاف ورزیوں کا سلسلہ جاری ہے۔پاکستان نے ایل او سی پر سیز فائر کی خلاف ورزی پر بھارتی سینئر سفارتکار کو شدید احتجاج ریکارڈ کرایا۔

میئر اسلام آباد کی سیٹ خالی قرار، الیکشن کمیشن

ذرائع کا کہنا ہے وزارت داخلہ سے سابق میئر شیخ انصر عزیز کے استعفی کا نوٹیفکیشن موصول ہونے کے بعد الیکشن کمیشن نے سیٹ کو خالی قرار دیا۔

کورونا کے پیشِ نظر ملک کے تمام تعلیمی ادارے بند کرنے کا فیصلہ

ملک بھر میں کورونا وائرس خاص طور پر تعلیمی اداروں میں کیسز کی شرح میں اضافے کو دیکھتے ہوئے حکومت نے ملک بھر کے تمام تعلیمی اداروں کو 26 نومبر سے بند کرنے کا فیصلہ کرلیا تاہم اس دوران گھروں سے تعلیم کا سلسلہ جاری رکھا جائے گا۔

کورونا کی دوسری لہر: پاکستان میں فعال کیسز 38 ہزار سے تجاوز کر گئے

دنیا بھر میں کورونا وائرس کی دوسری لہر جاری ہے اور پاکستان میں بھی اس میں شدت آتی جارہی ہے جس کے باعث مختلف علاقوں میں اسمارٹ اور مائیکرو لاک ڈاؤن نافذ کیا جاچکا ہے جبکہ کیسز اسی رفتار سے بڑھنے پر مکمل لاک ڈاؤن کا عندیہ بھی دے دیا ہے۔
ملک میں اس وائرس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 3 لاکھ 76 ہزار 929 ہے جس میں سے 3 لاکھ 30 ہزار 885* صحتیاب ہوئے ہیں جو تقریباً 88 فیصد سے زائد ہے جبکہ اموات کی تعداد **7 ہزار 696 تک پہنچ گئی ہیں۔
سرکاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک میں کورونا وائرس کے 2 ہزار 756 کیسز اور 34 اموات کا اضافہ رپورٹ ہوا جبکہ ایک ہزار 57 مریض صحتیاب بھی ہوئے جس کے بعد فعال کیسز کی تعداد 38 ہزار 348 تک پہنچ گئی۔
خیال رہے کہ ملک میں اس عالمی وبا کا پہلا کیس 26 فروری 2020 کو رپورٹ ہوا تھا جس کے بعد سے جون تک وبا کے پھیلاؤ میں تیزی دیکھی گئی تھی۔
تاہم جولائی میں صورتحال بہتر ہونا شروع ہوئی تھی اور یہ سلسلہ ستمبر کے اوائل تک جاری رہا تھا۔
جس کے بعد ستمبر کے وسط سے ایک مرتبہ پھر کیسز میں اضافہ ہونا شروع ہوا اور اکتوبر میں اس میں مزید تیزی آگئی، جس کا رجحان نومبر میں بھی نظر آرہا ہے اور یومیہ کیسز جو سیکڑوں میں اور اموات جو درجن سے بھی کم ہونا شروع ہوئی تھیں وہ بالترتیب اب ہزاروں اور درجنوں میں پہنچ چکی ہیں۔
آج 23 نومبر کو ملک میں کورونا وائرس کی صورتحال کچھ اس طرح ہے۔
سندھ
صوبہ سندھ جو اس وائرس سے سب سے زیادہ متاثر ہے وہاں 24 گھنٹوں میں مزید ایک ہزار 102 کیسز کا اضافہ ہوا اور مجموعی تعداد ایک لاکھ 63 ہزار 329 تک پہنچ گئی۔
سرکاری اعداد و شمار کے مطابق 24 گھنٹوں میں 13 افراد ایسے تھے جو اس عالمی وبا کے باعث انتقال بھی کرگئے اور یوں یہ تعداد 2 ہزار 829 تک جا پہنچی۔
پنجاب
صوبہ پنجاب میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران کورونا کے 498 نئے کیسز سامنے آئے جس کے بعد یہاں متاثرین کی تعداد ایک لاکھ 14 ہزار 508 ہوگئی۔
صوبے میں وبا کی وجہ سے مزید 13 مریض انتقال کر گئے جس کے بعد پنجاب میں اموات کی تعداد 2 ہزار 861 ہوگئی۔
خیبرپختونخوا
صوبہ خیبرپختونخوا میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 502 افراد کو وبا نے متاثر کیا جس کے بعد مجموعی متاثرین کی تعداد 44 ہزار 599ہوگئی۔
اس کے علاوہ 2 افراد لقمہ اجل بنے جس کے بعد اموات کی تعداد ایک ہزار 327 پر جا پہنچی۔
بلوچستان
صوبے میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 66 کیسز سامنے آئے اور یوں مجموعی کیسز 16 ہزار 810 تک پہنچ گئے۔
بلوچستان میں کورونا وائرس سے مرنے والوں کی تعداد میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں کوئی اضافہ نہیں ہوا اور اس طرح مجموعی تعداد 161 پر برقرار ہے۔
اسلام آباد
سرکاری اعداد و شمار کے مطابق دارالحکومت اسلام آباد میں وبا کے مزید 449 کیسز کی تصدیق ہوئی جس کے بعد یہاں متاثرہ افراد کی تعداد 27 ہزار 18 ہوگئی۔
دارالحکومت میں کورونا سے مزید ایک مریض جاں بحق بھی ہوا جس کے بعد یہاں اموات بڑھ کر 279 ہوگئیں۔
آزاد کشمیر
کورونا سے متعلق سرکاری ویب سائٹ کے مطابق آزاد کشمیر میں کورونا کے 123 نئے کیسز سامنے آنے کی تصدیق ہوئی جس کے بعد وادی میں متاثرین کی تعداد 6 ہزار 123 ہوگئی۔
آزاد کشمیر میں وائرس سے مزید 4 افراد زندگی کی بازی ہار گئے اور اس طرح وہاں اموات کی مجموعی تعداد 144 تک جا پہنچی۔
گلگت بلتستان
گلگت بلتستان میں وبا کے 16 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جس کے بعد یہاں متاثرہ افراد کی تعداد 4 ہزار 542 ہوگئی۔
علاقے میں ایک فرد کا انتقال بھی ہوا، جس کے بعد گلگت بلتستان میں مجموعی اموات 95 ہوگئیں۔
صحتیاب افراد
پاکستان میں کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کے صحتیاب ہونے کا سلسلہ بھی جاری ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں میں مزید ایک ہزار 57 افراد شفایاب ہوئے۔
سرکاری اعداد و شمار کے مطابق ان مریضوں کے شفایاب ہونے کے بعد مجموعی طور پر یہ تعداد 3 لاکھ 30 ہزار 885 ہوگئی۔
مجموعی صورتحال
ملک میں عالمی وبا کے کیسز، اموات اور صحتیاب افراد کی تعداد میں اضافے کے بعد اگر مجموعی صورتحال پر نظر ڈالیں تو وہ کچھ اس طرح ہے:
مصدقہ کیسز:376929
صحتیاب: 330885
اموات: 7696
فعال کیسز: 38348
ملک میں اس وائرس سے سب سے زیادہ متاثر صوبے سندھ اور پنجاب ہیں، صوبہ سندھ میں متاثرین کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 63 ہزار 329 ہے جبکہ پنجاب میں یہ تعداد ایک لاکھ 14 ہزار 508 تک پہنچ چکی ہے۔
صوبہ خیبر پختونخوا میں کورونا وائرس سے 44 ہزار 599 افراد متاثر ہوچکے ہیں جبکہ صوبہ بلوچستان میں وبا میں مبتلا ہونے والوں کی تعداد 16 ہزار 810 ہے۔
علاوہ ازیں وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں 27 ہزار 18 ، آزاد کشمیر میں 6 ہزار 123 اور گلگت بلتستان میں 4 ہزار 542 افراد عالمی وبا کا شکار ہوچکے ہیں۔
ملک میں کورونا سے اموات کی تعداد:
سندھ: 2829
پنجاب: 2861
خیبرپختونخوا: 1327
بلوچستان: 161
اسلام آباد: 279
آزاد کشمیر: 144
گلگت بلتستان: 95

حیدرآباد کے مختلف علاقوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن نافذ

نوٹیفکیشن کے مطابق دامن کوہسار اور ایئرپورٹ روڈ، لطیف آباد 6 نمبر، نسیم نگر چوک، وادھواہ روڈ، بھٹائی ٹاؤن، بھٹائی نگر میں بھی اسمارٹ لاک ڈاؤن کا نفاذ ہوگا۔

جنگ کا میدان لگ گیا،پیچھے ہٹنا گناہ کبیرہ ہے، فضل الرحمان

فضل الرحمان نے یہ بھی کہا کہ عمران خان نےکہاتھا کہ اگر بھارت میں نریندرمودی کامیاب ہو گیا تو کشمیر کا مسئلہ حل ہو جائےگا۔ انھوں نے کہا کہ نااہل حکمرانوں سےنجات پائیں گےتوملک کامستقبل محفوظ ہوگا، حکومت بھی ناجائز،اس حکومت کی داخلہ پالیسی بھی ناجائزہے۔