امریکی تاریخ کا طویل ترین قیدی رہا


رپورٹ ۔۔۔ خضر منظور

امریکی تاریخ کا طویل ترین قیدی رہا کر دیا گیا۔

جوزف لیگون کو 1953 میں قتل و فساد کے جرائم میں تاحیات قید کی سزا سنائی گئی، اس وقت ان کی عمر پندرہ سال تھی۔

جوزف لیگون نے زندگی کے 68 برس زنداں میں گزارے۔ ان کی عمر 83 برس ہے۔ لیگون رہائی پر خوش لیکن دوران قید وفات پا جانے والے رشتہ داروں کی جدائی پر دل گرفتہ ہیں۔

جوزف لیگون پر فلاڈلفیا میں ڈاکہ زنی کے دوران چار دوستوں سے ملکر دو افراد کو قتل کرنے کا الزام تھا۔ انہوں نے ڈاکہ زنی کے دوران کسی کی جان لینے کے الزام سے انکار کیا تھا جس کے باعث انہیں بلا ضمانت تاحیات قید کی سزا سنائی گئی تھی۔

2017 میں انہیں پیرول پر رہائی کی اجازت ملی جسے لینے سے انہوں نے انکار کر دیا تھا، وہ اب تک طویل ترین سزا پانے والے امریکی تاریخ کے سب سے کم عمر شخص ہیں۔

 2012 میں امریکہ نے کم عمر نوجوانوں کی عمر قید کو ختم کرنے کے احکامات جاری کئے تھے جس کے باعث  جوزف لیگون کی رہائی ممکن ہوئی۔


اپنا تبصرہ بھیجیں