سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصرکا طیارہ کابل ایئرپورٹ سے کیوں واپس کر دیا گیا؟ جانئے اس خبر میں


افغانستان کے دارالحکومت کابل میں سیکورٹی صورتحال خراب ہونے پر پاکستان کے پارلیمانی وفد کا دورہ افغانستان منسوخ کر دیا گیا ہے۔

وفد کے ہمراہ جانے والے پاکستان کے نمائندہ خصوصی برائے افغانستان محمد صادق نےذرائع   کو بتایا کہ ان کا طیارہ ابھی کابل میں حامد کرزئی ایئر پورٹ پر لینڈ ہی کرنے والا تھا کہ اطلاع دی گئی کہ سکیورٹی کی وجہ سے ایئرپورٹ بند کر دیا گیا ہے۔ جس پر طیارہ واپس ہوا میں بلند ہو گیا۔

انہوں نے بتایا کہ پاکستان کا پارلیمانی وفد سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی قیادت میں کابل جا رہا تھا اور اس میں دیگر جماعتوں کے ارکان اسمبلی بھی موجود تھے۔یہ دورہ کابل کے ولسی جرگے (مجلس نمائندگان) کے سربراہ کی دعوت پر ہو رہا تھا۔

کابل میں پاکستانی سفارت خانے کے ایک عہدیدار نے  ذرائع  کو بتایا کہ افغان حکومت کی جانب سے کہا جا رہا ہے کہ ایئرپورٹ پر ایک چھوٹا سے دھماکہ ہوا ہے اور وہاں پر کچھ مواد بھی تھا۔

جمعرات کی صبح سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر پارلیمانی وفد کے ہمراہ افغانستان روانہ ہوا تھا۔

وفد میں نمایندہ خصوصی برائے افغانستان محمد صادق خان اور رکن پارلیمان غلام مصطفے شاہ، ساجد خان، رانا تنویر، گل داد خان، شیخ یعقوب اور شاندانہ گلزار بھی شامل تھیں۔

پارلیمانی وفد کے دورےکا مقصد دونوں ممالک کے درمیان اعتماد کے فقدان کو ختم کرنا تھا۔


Leave A Reply

Your email address will not be published.